07:14 pm
واپڈا ملازمین کو مفت بجلی نہیں ملے گی، جنوری سے سمارٹ میٹر اگلے ماہ قرضہ پر سو لر پینل پالیسی کا اعلان

واپڈا ملازمین کو مفت بجلی نہیں ملے گی، جنوری سے سمارٹ میٹر اگلے ماہ قرضہ پر سو لر پینل پالیسی کا اعلان

07:14 pm


اسلام آباد (نیوز ڈیسک) وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس میں ہدایت کی گئی ہے کہ بجلی کے لائن نقصانات میں کمی کے لئے منصوبہ مرتب کیا جائے گا۔ وزیر اعظم نے بجلی کی ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کو صوبوں کے حوالے کرنے کے لئے پلان بنانے کی ہدایت کی۔ آئندہ درآمدی ایندھن پر منحصر کوئی پاور پلانٹ نہیں
لگایا جائے گا۔ اجلاس میں قومی احتساب 2022 بل سمیت متعدد قوانین کے مسودات کی منظوری دی۔ داخلہ ڈویژن کی سفارش پر چار افراد کے نام ای سی ایل پر ڈالنے اور پانچ افرادکے نام نکالنے کی منطوری دی۔ وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کے اجلاس میں پاور ڈویژن کی طرف سے ملک میں لوڈشیڈنگ پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ بریفنگ میں بتایا گیا کہ جون 2022 کے مہینے میں ملک بھر میں بجلی کی جنریشن 23900 میگاواٹ تک تھی۔ اور اسی مہینے ایسے پلانٹس جو کہ وقت پر مکمل نہیں ہوسکے اس کی وجہ سے چار ہزار میگاواٹ بجلی سسٹم میں شامل نہیں ہوسکی۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت اور آپریشنل صلاحیت میں فرق ہے۔ پنجاب تھرمل پلانٹ 1263 کو دسمبر 2019ء میں مکمل ہونا تھا لیکن یہ جولائی 2022ء میں مکمل ہوا ہے۔ اس میں 26 ماہ کی تاخیر ہوئی ہے۔ تھر انرجی مارچ 2021ء میں مکمل ہونا تھا جو اگست 2022ء میں مکمل ہوگا جس میں 17 ماہ کی تاخیر ہے۔ تھل نووا 330 میگاواٹ کا پراجیکٹ ہے اسے مارچ 2021ء میں مکمل ہونا تھا جو دسمبر 2022ء کو مکمل ہوگا جس میں تقریباً 20 ماہ کی تاخیر ہے۔ شنگھائی الیکٹرک پاور 1320 میگاواٹ کا منصوبہ مارچ 2021ء میں مکمل ہونا تھا جو دسمبر 2022ء میں مکمل ہوگا۔ اس میں بھی 20 ماہ کی تاخیر ہے۔ کروٹ پاور 720 میگاواٹ کا پاور پلانٹ اگست 2021ء کو مکمل ہونا تھا جو جون 2022ء میں مکمل ہوا ہے جس میں تقریباً 10 ماہ کی تاخیر ہوئی۔ اجلاس کو مزید بتایا گیاکہ اگست اور ستمبر کے مہینوں میں بارشوں کی وجہ سے ہائیڈل پاور گنجائش مکمل آپریشنل ہوگی۔ اجلاس کو مزید بتایا گیا کہ تربیلا ڈیم کی سطح میں اضافہ ہوا ہے اور تربیلا ڈیم سے مزید 2000 میگاوٹ بجلی سسٹم میں شامل ہوجائے گی۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ آر ایل این جی پلانٹس زیادہ درجہ حرارت کی وجہ سے اپنی مکمل گنجائش پر کام نہیں کرسکتے۔ اجلاس کو بجلی کی لوڈشیڈنگ سے نمٹنے کے حوالے سے آئندہ کی حکمت عملی پر بریفنگ دی گئی۔ ہسپتالوں اور صنعتوں کو بجلی کی فراہمی میں تعطل نہ آئے۔ اتفاق کیا گیا کہ لائن لاسز میں کمی کے لیے ایک مکمل پلان مرتب کیا جائے گا۔ اتفاق کیا گیا کہ گردشی قرضے میں کمی لانے کی کوششوں میں تیزی لائے جائے گی۔ وزیراعظم نے کہا کہ اگر ایسے پراجیکٹس جو کہ تاخیر کا شکار ہیں وقت پر مکمل کرلیے جاتے تو ہمیں آج بجلی کی لوڈشیڈنگ کا مسئلہ درپیش نہ ہوتا۔ وزیراعظم نے کہا کہ چونکہ پچھلی حکومت نے وقت پر گیس نہیں خریدی اس لیے ہمیں ایندھن سے چلنے والے پاور پلانٹس کے لیے تیل کی خریداری کرنی پڑی۔ وزیراعظم کہ کہنا تھا کہ ہم اس شدید گرمی میں عوام کو لوڈشیڈنگ کی مشکلات سے نبردآزما نہیں ہونے دینا چاہتے۔ وزیراعظم نے مزید کہا کہ پاور ڈسٹری بیوشن کمپنیز کو صوبوں کے حوالے کرنے کے حوالے سے ایک تفصیلی پلان مرتب کیا جائے۔ وزیراعظم نے وزیر توانائی انجینئر خرم دستگیرکو ہدایت کی کہ وہ 2 سب سے بہترین کارکردگی والی ڈسٹری بیوشن کمپنیز اور 2 سب سے خراب کارکردگی والی ڈسٹری بیوشن کمپنیز کا دورہ کریں اور ان دونوں کمپنیز کی کارکردگی کے فرق کے حوالے سے تفصیلی رپورٹ کابینہ میں جمع کروائیں۔ وزیراعظم نے وفاقی مشیر برائے نیشنل فوڈ سکیورٹی طارق بشیر چیمہ کو یہ ہدایت کی کہ وہ ٹیوب ویلز کی سولر انرجی پر منتقلی کے حوالے سے ایک پلان جلد از جلد مرتب کریں۔ وزیراعظم نے کہا کہ آئندہ کوئی بھی امپورٹڈ ایندھن پر چلنے والا پاور پلانٹ نہیں لگایا جائے گا۔ وزیراعظم نے متعلقہ حکام کو مخاطب کرتے ہوئے کہ اگر آپ نے بجلی کی لوڈشیڈنگ پر قابو پالیا تو آپ لاکھوں لوگوں کے دل جیت لیں گے۔ وزیراعظم نے پاور ڈویژن کو ہدایت کی کہ حتی المقدور کوشش کی جائے کہ ملک میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ دو گھنٹے سے زیادہ نہ ہو۔ وفاقی کابینہ نے خزانہ ڈویژن کی سفارش پر سیکورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان کے لیے ایکسٹرنل آڈیٹر کے طور پر تعیناتی کی منظوری دی۔ وفاقی کابینہ نے کابینہ ڈویژن کی سفارش پر قومی احتساب بل2022سمیت متعدد قوانین کی بھی منطوری دی، حکومت کی سطح کمرشل ٹرانزیکشن کے لیگل فریم ورک کے حوالے سے وزیر دفاع خواجہ آصف کی صدرت میں ٹاسک فورس قائم کرنے کی منظوری دی ، کابینہ نے سندھ ہائی کورٹ کے فیصلے پر 2 کیسز میں ایک مرتبہ اجازت دینے (OTP) کی منظوری دی۔ وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگ زیب نے کہا کہ پچھلے چار سال راگ الاپا جاتا رہا کہ مسلم لیگ (ن) اضافی بجلی پیدا کر کے گئی، پچھلے چار سال کے دوران کئی اہم منصوبے شروع نہیں ہو سکے، اسی وجہ سے ہماری بجلی کی پیداوار متاثر ہے۔ انہوں نے کہا کہ کابینہ کے اجلاس میں پاکستان سٹیل ملز کی بحالی (پی ایس ایم سی) ٹرانزیکشنز سروسز انٹرنیشنل ہوٹل لاہور کی نجکاری کے حوالے سے کابینہ کمیٹی برائے نجکاری کے فیصلے پر بھی غور کیا، سولر انرجی پر ٹاسک فورس کی پریزنٹیشن کو اگلے کابینہ کے اجلاس میں پیش کیا جائے گا، زراعت کے بارے میں قائم ٹاسک فورس موجودہ بجٹ 2022ء میں دی گئی مراعات پر عمل درآمد کے لئے اپنی تجاویز کابینہ کو پیش کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کی طرف سے ایسا بیانیہ بنانے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ اتحادی جماعتیں اپنے خلاف کیسز ختم کروانے کے لئے نیب ترامیم کر رہیں۔ عمران خان نے جتنے الزامات لگائے وہ عدالت میں ایک الزام بھی ثابت نہیں کر سکے۔ وفاقی وزیر بجلی خرم دستگیر خان نے کہا مختلف منصوبوں سے آئندہ موسم گرما تک 7 ہزار میگاواٹ بجلی سسٹم میں شامل ہو جائے گی۔ ایک سال میں ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کے واجبات کی وصولی اور آپریشن بہتر ہو جائے گا، میٹر ریڈنگ کی شکایات کے خاتمہ کیلئے رواں سال کے آخر یا آئندہ سال کے اوائل سے صرف سمارٹ میٹرز ہی لگائے جائیں گے۔ سرکاری و نجی عمارات کو شمسی توانائی پر منتقل کرنے کیلئے اقدامات کئے جا رہے ہیں جبکہ چھوٹے صارفین کو آسان قرضوں پر سولر پینل فراہم کرنے کا منصوبہ بنایا گیا ہے، چار ہفتوں میں پالیسی کا اعلان کر دیا جائے گا۔ عید سے پہلے تربیلا پاور سٹیشن اپنی مکمل 3500 میگاواٹ کی پیداوار شروع کر دے گا جس سے لوڈ شیڈنگ میں نمایاں کمی ہو گی، کے۔ٹو پاور پلانٹ سے بھی 1100 میگاواٹ بجلی سسٹم میں شامل کی جا رہی ہے جس سے عید کے دنوں میں لوڈ شیڈنگ میں بڑا ریلیف ملے گا۔ آئندہ انتخابات 2023ء میں موجودہ پارلیمان کی مدت مکمل ہونے کے بعد ہوں گے اور انتخابات صاف شفاف ہوں گے جس سے ایک خوشحال، مضبوط اور جمہوری پاکستان کی بنیاد پڑے گی۔ خرم دستگیر خان نے کہا کہ غریب ترین صارفین جو 100 یونٹ تک بجلی استعمال کرتے ہیں انہیں ریلیف دیا جا رہا ہے اور 100 سے 200 یونٹس تک کے بجلی صارفین کیلئے بجلی مہنگی نہیں کی جائے گی، انہوں نے کہا کہ ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کے ملازمین کو بجلی کے یونٹس کی فراہمی 1960ء کی دہائی سے چلی آ رہی ہے، اصلاحات کا ایک پیکیج تیار کیا جا رہا ہے کہ انہیں تنخواہ میں بجلی کی مفت فراہمی کی بجائے سہولت دی جائے گی۔ بجلی کی قیمت کی ری بیسنگ کا کام انتہائی ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ تریموں میں آر ایل این جی پاور پلانٹ نیب گردی کا شکار ہوا رواں سال کے آخر یا 2023ء کے شروع میں لگنے والا ہر نیا میٹر سمارٹ میٹر ہو گا، اس سے بجلی کی ریڈنگ کے حوالہ سے شکایات دور ہو جائیں گی۔ مشیر امور کشمیر و گلگت بلتستان قمر زمان کائرہ نے کہا کہ ہمیں احساس ہے کہ شدید ترین گرمی میں انتہا کی لوڈ شیڈنگ ہے، حکومت جانتی ہے کہ وہ جو مشکل فیصلے کر رہی ہے اس کے سیاسی اثرات ضرور آئیں گے۔ ان حالات کی وجہ سے بھی اور کچھ گذشتہ حکومت کی جانب سے بروقت اور درست فیصلے نہ کرنے کی وجہ سے ہماری مشکلات میں اضافہ ہوا۔ قوم کو ایک جھوٹ کا خواب دکھایا گیا کہ ہمارے پاس انسٹال کیپسٹی 40 ہزار میگاواٹ ہے۔ اس وقت ہمارے پاس 24 ہزار میگاواٹ بجلی ہے جبکہ طلب 30 ہزار کے قریب ہے جس کی وجہ سے لوڈ شیڈنگ ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سال 1072 ارب روپے سبسڈی لائن لاسز یا ریلیف کے دیگر مدات میں دی گئی، باوجود 283 ارب روپے کا سرکلر ڈیٹ پڑا ہے، پی ٹی آئی حکومت نے مسلم لیگ (ن) اور ہماری حکومت کے خلاف تو بہت پروپیگنڈا کیا لیکن اپنے دور میں کارخانے نہ لگا کر مجرمانہ غفلت کی، نیوکلیئر پاور، پن بجلی، ونڈ سمیت تمام کارخانے چلا دیئے جائیں اور پھر بھی ہم طلب پوری نہ کر سکیں تو اس کی ذمہ داری موجودہ حکومت پر نہیں ڈالی جا سکتی، وزیراعظم نے حکم دیا کہ تین گھنٹے سے زیادہ لوڈ شیڈنگ نہیں ہونی چاہئے، یہ جو سارے فیصلے ہم کر رہے ہیں ہم علم ہے کہ یہ خوشی کے فیصلے نہیں ہیں، ان فیصلوں سے آپ نے ناراض بھی ہونا ہے، گذشتہ حکومت یہ فیصلے اس لئے نہیں کر سکی کہ اسے لوگوں کی ناراضگی اور سیاسی نقصان گواراہ نہیں تھا، ہم نے مشکل فیصلے کرکے اپنے آپ کو رسک میں ڈال لیا ہے، ہمیں توقع کہ آئندہ صورتحال بہتر رہے گی۔ ایک سوال کے جواب میں قمر زمان کائرہ نے کہا کہ کشمیر کو بجلی کی جتنی ضرورت ہے اس کا کوٹہ مقرر ہے، وہ ہمیں ملتی ہے، وہاں پر ان کا ڈسٹری بیوشن کا نظام اپنا ہے، وزیر مملکت پیٹرولیم مصدق ملک نے کہا کہ حکومت کے پاس موسم سرما کیلئے گیس دستیاب نہیں ہے۔

تازہ ترین خبریں

سینٹرل سلیکشن بورڈ کا اجلاس 10اگست کوکتنے افسران کو ترقی دی جائیگی،بڑی خبرآگئی

سینٹرل سلیکشن بورڈ کا اجلاس 10اگست کوکتنے افسران کو ترقی دی جائیگی،بڑی خبرآگئی

عوام ہوجائیں تیار۔۔اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بری خبرسنادی

عوام ہوجائیں تیار۔۔اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے بری خبرسنادی

پاور سیکٹر میں پی ٹی آئی حکومت کا اربوں روپے کا گھپلا بے نقاب

پاور سیکٹر میں پی ٹی آئی حکومت کا اربوں روپے کا گھپلا بے نقاب

لیگی رہنما نذیر چوہان کی ضمانت منظور، پی ٹی آئی رکن اسمبلی نے گلے لگالیا

لیگی رہنما نذیر چوہان کی ضمانت منظور، پی ٹی آئی رکن اسمبلی نے گلے لگالیا

پاکستان کے سب سے بڑے شہرمیں اہم ترین حکومتی شخصیت کوڈاکوئوں نے لوٹ لیا

پاکستان کے سب سے بڑے شہرمیں اہم ترین حکومتی شخصیت کوڈاکوئوں نے لوٹ لیا

پنجاب حکومت کے حلف لینے والے 21 وزرا کو قلم دان تفویض

پنجاب حکومت کے حلف لینے والے 21 وزرا کو قلم دان تفویض

دانیہ کو کچھ ہوا تو ذمہ دار کون ہوگا،دانیہ شاہ کی والدہ نے بڑااعلان کردیا

دانیہ کو کچھ ہوا تو ذمہ دار کون ہوگا،دانیہ شاہ کی والدہ نے بڑااعلان کردیا

سعودی عرب ترقی کی راہ پر گامزن، بڑی خبر آگئی

سعودی عرب ترقی کی راہ پر گامزن، بڑی خبر آگئی

پی ٹی آئی پر پابندی؟ قانونی ٹیم کا حکومت کو محتاط رہنے کا مشورہ

پی ٹی آئی پر پابندی؟ قانونی ٹیم کا حکومت کو محتاط رہنے کا مشورہ

پاکستان کے سب سے بڑے شہرمیں اہم ترین حکومتی شخصیت کوڈاکوئوں نے لوٹ لیا

پاکستان کے سب سے بڑے شہرمیں اہم ترین حکومتی شخصیت کوڈاکوئوں نے لوٹ لیا

10 سال سے پنسل پر دھاگوں سے قرآن بُن رہا ہوں۔۔پولیس والے نے قرآن مجید سے محبت کی انوکھی مثال قائم کردی

10 سال سے پنسل پر دھاگوں سے قرآن بُن رہا ہوں۔۔پولیس والے نے قرآن مجید سے محبت کی انوکھی مثال قائم کردی

وفاق نے وزیراعلیٰ پرویز الہٰی کو خط لکھ دیا

وفاق نے وزیراعلیٰ پرویز الہٰی کو خط لکھ دیا

ایف آئی اے نے اہم شخصیت کو گرفتار کرلیا

ایف آئی اے نے اہم شخصیت کو گرفتار کرلیا

سی اے اے کے ساتھ تنازع، پی ایس او کا تمام ہوائی اڈوں پر ایندھن کی سہولت روکنے کا امکان

سی اے اے کے ساتھ تنازع، پی ایس او کا تمام ہوائی اڈوں پر ایندھن کی سہولت روکنے کا امکان