01:04 pm
 اراکین کشمیر کونسل کے لئے ترقیاتی فنڈز مختص، سکیمیں طلب (ممبران وزیراعظم سے نقد رقم لینے پر بضد)

اراکین کشمیر کونسل کے لئے ترقیاتی فنڈز مختص، سکیمیں طلب (ممبران وزیراعظم سے نقد رقم لینے پر بضد)

01:04 pm

وزیراعظم نےممبران کشمیر کونسل کے لئے ایک ایک کروڑ روپے محکمہ لوکل گورنمنٹ کے فنڈ سے مختص کر دیئے، محکمہ نے ممبران کشمیر کونسل سے سکیمیں مانگ لیں ممبران کشمیر کونسل نےحکومت سے فی ممبر پانچ پانچ کروڑ لینے کا فیصلہ کیا تھا ، چند دنوں میں ممبران فیصلہ کریں گے کہ سکیمیں دی جائیں یا فنڈزوزیراعظم سے نہ لیا جائے مظفرآباد( سٹاف رپورٹر) وزیراعظم آزادکشمیر نے ممبران کشمیر کونسل کے لیے ایک ایک کروڑ روپے محکمہ لوکل گورنمنٹ کے فنڈ سے مختص کر دیے ۔ محکمہ نے ممبران کشمیر کونسل سے سکیمیں مانگ لیں۔ جبکہ ممبران کشمیر کونسل نے اپنے ایک اجلاس میں 1کروڑ روپے فی ممبر لینے سے انکار کر دیا تھا اپوزیشن اور حکومتی ممبران کشمیر کونسل نے ایک مشترکہ اجلاس میں فیصلہ کیا تھا کہ حکومت اگر فی ممبر پانچ پانچ کروڑ دے گی تو لیں گے۔بصورت دیگر حکومتی فنڈز سے ایک پینی نہیں لی جائے گی۔ یاد رہے کہ تیرہویں ترمیم کے بعد کونسل کے صوابدید ختم ہو گئے تھے تمام ممبران کشمیر کونسل حکومت کے رحم وکرم پر آگئے تھے ان دو سالوں میں ممبران کشمیر کونسل کو حکومت کی طرف سے مکمل طور پر نظر انداز رکھا گیا تھا ۔ذرائع کے مطابق وزیراعظم آزادکشمیر نے اپنی صوابدید پر محکمہ لوکل گورنمنٹ کے فنڈز سے ممبران کشمیر کونسل کے لیے ایک ایک کروڑ روپے فی ممبر کو دینے کا حتمی فیصلہ کر لیا ہے ۔ محکمہ لوکل گورنمنٹ نے جملہ ممبران سے ایک کروڑ کی مد میں سکیمیں بھی مانگ لی ہیں۔ذرائع کے مطابق آئندہ چند دنوں میں ممبران کشمیر کونسل اس حوالے سے متفقہ طور پر فیصلہ کریں گے کہ محکمہ کو سکیمیں دی جائیں یا ایک ایک کروڑ وزیراعظم سے نہ لیا جائے۔ سکیمیں

تازہ ترین خبریں