05:33 pm
مریم نواز کو ریلیف دیدیا گیا

مریم نواز کو ریلیف دیدیا گیا

05:33 pm

لاہور(نیوز ڈیسک)احتساب عدالت نے مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز اور ان کے کزن یوسف عباس شریف کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر کیمپ جیل بھیجنے کا حکم دے دیا۔احتساب عدالت لاہور نے مریم نواز اور یوسف عباس شریف کے خلاف چودھری ملز اور منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کی تو دونوں ملزمان کو سخت سیکیورٹی میں عدالت میں پیش کیا گیا۔ نیب تفتیشی افسر نے ملزمان کے جسمانی ریمانڈ میں توسیع کی استدعا کرتے ہوئے کہا کہ ان کے اثاثے ان کی آمدن سے مطابقت نہیں رکھتے۔مریم نواز کے وکیل امجد پرویز نے کہا کہ مریم نواز اور یوسف عباس پر نواز شریف کی منی لانڈرنگ میں معاونت کرنے کا الزام لگایا گیا مگر کوئی ثبوت پیش نہیں کیا گیا،
ملزمان کو ذہنی اذیت دی جاتی ہے، گزشتہ 7 روز میں ملزمہ سے تفتیش ہی نہیں کی گئی۔احتساب عدالت لاہورنےمریم نواز اور یوسف عباس کے مزیدجسمانی ریمانڈکی استدعا مسترد کرتے ہوئے 9 اکتوبرتک جوڈیشل ریمانڈمنظور کرتے ہوئے جیل بھیجنے کا حکم دے دیا۔دوران سماعت عدالت نے استفسار کیا کہ مریم نواز کی تاریخ پیدائش کیا ہے؟ نیب کے تفتیشی افسر نے بتایا کہ مریم نواز کی پیدائش کا سال 1973ء ہے مگر تاریخ کا علم نہیں۔اس موقع پر مریم نواز نے بتایا کہ میری تاریخ پیدائش 28 اکتوبر 1973ء ہے۔ دوران سماعت مریم نواز نے کوٹ لکھپت جیل منتقلی کی استدعا کی ۔ مریم نواز نے کہا کہ کیمپ جیل میں خواتین ملزموں کے لیے کوئی انتظام نہیں ہے۔ جج صاحب میری درخواست ہے کہ مجھے کوٹ لکھپت جیل منتقل کرنے کا حکم دیا جائے، میری گھر کی ضرورت کا سامان ماڈل ٹاؤن سے آ سکتا ہے۔ جس کے بعد عدالت نے مریم نواز اور یوسف عباس کے جسمانی ریمانڈ میں توسیع کی استدعا کو مسترد کر دیا اور مریم نواز اور یوسف عباس کو جوڈیشل ریمانڈ پر کیمپ جیل بھیجنے کا حکم دے دیا۔عدالت نے مریم نواز کو یوسف عباس کو دوبارہ 9 اکتوبر کو پیش کرنے کا حکم دے دیا۔ قبل ازیں مریم نواز کی عدالت میں پیشی کے وقت لیگی کارکنوں کی بڑی تعداد اظہار یکجہتی کے لیے عدالت پہنچی۔ لیگی کارکنوں نے حکومت کے خلاف اور مریم نواز کے حق میں شدید نعرے بازی کی۔ پولیس نے لیگی کارکنوں کو احتساب عدالت کی طرف جانے سے روکا جس پر کارکنوں اور پولیس کے درمیان دھکم پیل ہوئی۔ لیگی کارکنوں کا کہنا تھا کہ ہم مریم نواز سے اظہار یکجہتی کے لیے آئے ہیں، اور اُن سے ملاقات کر کے ہی جائیں گے۔ پولیس اہلکاروں نے سکیورٹی وجوہات کی بنا پر کارکنوں کو احتساب عدالت جانے سے روک دیا تھا جبکہ عدالت کے باہر خار دار تاریں بھی لگائی گئی تھیں۔

شاہد خاقان کو نیب اہلکار کی جانب سے دوران تفتیش گلاس مارے جانے کا دعویٰ ،سابق وزیر اعظم خود میدان میں آ گئے ، سچائی بتا دی

شاہد خاقان کو نیب اہلکار کی جانب سے دوران تفتیش گلاس مارے جانے کا دعویٰ ،سابق وزیر اعظم خود میدان میں آ گئے ، سچائی بتا دی

پاکستان میں آج پھر ہولناک زلزلہ ، 65افراد بارے افسوسناک اطلاعات موصول

پاکستان میں آج پھر ہولناک زلزلہ ، 65افراد بارے افسوسناک اطلاعات موصول

زلزلے میں کتنے افراد جاں بحق اور زخمی ہوئے،کل کتنے گھرتباہ ہوگئے؟این ڈی ایم اے نے تازہ ترین اعداد و شمار جاری کردئیے

زلزلے میں کتنے افراد جاں بحق اور زخمی ہوئے،کل کتنے گھرتباہ ہوگئے؟این ڈی ایم اے نے تازہ ترین اعداد و شمار جاری کردئیے

اسلام آبادسمیت میرپوراور گردونواح میں زلزلے کے پھر جھٹکے ، ہر چیز ہل گئی ،جانتے ہیں اب کی بار کتنا نقصان ہوا؟

اسلام آبادسمیت میرپوراور گردونواح میں زلزلے کے پھر جھٹکے ، ہر چیز ہل گئی ،جانتے ہیں اب کی بار کتنا نقصان ہوا؟

چونیاں اورقصور سے اغواء ہونے والے بچوں کو قتل کرنے والامبینہ ملزم گرفتار،کہاں اور کس کے گھر سے پکڑا گیا؟جانئے

چونیاں اورقصور سے اغواء ہونے والے بچوں کو قتل کرنے والامبینہ ملزم گرفتار،کہاں اور کس کے گھر سے پکڑا گیا؟جانئے

پاکستان کی وہ معروف یونیورسٹی جہاں طلبا اور طالبات کے اکھٹے گھومنے پر پابندی عائد کردی گئی ،ایسا کرنا غیر اسلامی اور غیر اخلاقی عمل قرار

پاکستان کی وہ معروف یونیورسٹی جہاں طلبا اور طالبات کے اکھٹے گھومنے پر پابندی عائد کردی گئی ،ایسا کرنا غیر اسلامی اور غیر اخلاقی عمل قرار

ابہام ختم ہوگیا، پوری امہ مسئلہ کشمیر کے حوالے سے مکمل طورپر متحد، او آئی سی سی کے مشترکہ اعلامیہ پر تمام ممبران نے توثیقی دستخط کردیئے

ابہام ختم ہوگیا، پوری امہ مسئلہ کشمیر کے حوالے سے مکمل طورپر متحد، او آئی سی سی کے مشترکہ اعلامیہ پر تمام ممبران نے توثیقی دستخط کردیئے

”مذہبی انتشار“پھیلانے کے حق میں نہیں،(ن)لیگ نے مولانا فضل الرحمان کو بڑا سرپرائز دے دیا، حیرت انگیز اعلان

”مذہبی انتشار“پھیلانے کے حق میں نہیں،(ن)لیگ نے مولانا فضل الرحمان کو بڑا سرپرائز دے دیا، حیرت انگیز اعلان