08:59 am
نیب کا تفتیشی افسر سابق وزیر اعظم سے تفتیش کے دوران مشتعل ہوا اور گلاس اٹھا کے دے مارا

نیب کا تفتیشی افسر سابق وزیر اعظم سے تفتیش کے دوران مشتعل ہوا اور گلاس اٹھا کے دے مارا

08:59 am

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)بے ڈھنگی اور تکلیف دہ صورتحال میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے جسمانی ریمانڈ کے دوران قومی احتساب بیورو (نیب) کے ایک افسر نے بدسلوکی کی تاہم نیب نے ایسی کسی خبر کو سختی سے مسترد کر دیا۔ نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ تفتیش اور پوچھ گچھ کے دوران تفتیشی ٹیم کا رکن ان پر چلّایا اور بعدازاں بدسلوکی کی۔ ذرائع کے مطابق یہ واقعہ نیب راولپنڈی کے دفتر واقع میلوڈی اسلام آباد میں پیش آیا۔ذرائع کا دعویٰ ہے کہ مذکورہ تفتیشی افسر کو پٹرولیم ماہر کے طور پر ٹیم میں شامل کیا گیا۔ مذکورہ واقعہ کے وقت یہ افسر سابق وزیراعظم کے جوابات پر مشتعل ہوگیا اور اطلاعات کے مطابق بدسلوکی کے علاوہ گلاس بھی پھینک کر مارا۔
دیگر افسران جن میں تفتیشی افسر ایم زبیر شامل تھے۔ انہوں نے صورتحال کو سنبھالا۔ ذرائع نے بھی رابطہ کرنے پر بتایا کہ اس واقعہ کی رپورٹ ڈائریکٹر جنرل نیب راولپنڈی عرفان نعیم منگی کو دے دی گئی ہے۔ ایک نیب افسر نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر دعویٰ کیا کہ داخل کردہ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ مذکورہ افسر نے نہیں بلکہ سابق وزیراعظم نے مزاحمت کی۔دوسری جانب سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ مجھے جو گلاس مارے گا اسے جو ماروں گا وہ سب دیکھیں گے۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ عدالت میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ میرے ساتھ کوئی بدسلوکی نہیں ہوئی