04:57 pm
 20سالہ فضاء ویڈیو بناتے ہوئے کیسے دردناک موت کا نشانہ بن گئی

20سالہ فضاء ویڈیو بناتے ہوئے کیسے دردناک موت کا نشانہ بن گئی

04:57 pm

کراچی (نیوز ڈیسک)ٹک ٹاک نے کا جنون 20 سالہ لڑکی کی جان لے گیا۔تفصیلات کے مطابق گذشتہ کچھ عرصے سے ٹک ٹاک نامی ایپ نے بہت مقبولیت حاصل کی ہے،جس میں صارفین مختلف گانوں پر ڈبنگ کرتے ہوئے اپنی ویڈیوز بناتے ہیں۔ٹک ٹاک ایپ پر ہمیں چھوٹے بڑے ہر عمر کے افراد کی ویڈیوز نظر آتی ہیں ،پاکستان میں بھی کچھ عرصہ سے ٹک ٹاک نے خاصی مقبولیت حاصل کی ہے۔اور اب یہ عالم ہے کہ ٹک ٹاک پر کچھ منفرد کرنے کے چکر میں اکثر لوگ بہت بڑا نقصان اٹھا بیٹھتے ہیں۔مختلف ممالک سے ٹک ٹاک پر ویڈیوز بنانے کی وجہ منفرد کاموں کے چکر میں لوگوں کی اموات کے واقعات رپورٹ ہوئے ہیں اور اب ایسای ہی ایک واقعہ پاکستان میں بھی پیش آیا ہے۔
اس حوالے سے میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ کراچی میں ایاک افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے۔جہاں ٹک ٹاک پر ویڈیو بنانے کا جنون نوجوان لڑکی کی موت کا سبب بن گیا۔قیوم آباد کے علاقے سی ایریا میں 20سالہ فضاء ویڈیو ریکارڈ کر رہی تھی کہ گولی چل گئی۔ لڑکی کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ فضاء پستول سے ویڈیو بنا رہی تھی، تاہم پستول سے گولی چلی اور اس کے سینے پر لگی جس سے وہ جاں بحق ہو گئی۔مذکورہ لڑکی کے اہل خانہ غم سے نڈھال ہیں۔خیال رہے کہ ٹک ٹاک ایپ جہاں بہت سارے لوگوں کے لیے تفریخ کا سامان ہے وہیں کچھ لوگ اس ایپ سے تنگ بھی ہیں۔وزیراعظم پورٹل پر بھی اس حوالے سے ایک شہری نے شکایت کی تھی۔اور کہا کہ ٹک ٹاک نامی ایپ کو بند کیا جائے کیونکہ یہ معاشرے میں خرابی کا سبب بن رہا ہے۔شہری نے شکایت میں کہا کہ tik tok نامی سافٹ وئیر ہمارے معاشرے کو خراب کر رہا ہے اس لیے اسے بند کیا جائے۔جب اس متعلق دیگر لوگوں کی رائے جانی گئی تو ان کا کہنا تھا کہ جن لوگوں ٹک ٹاک ایپ استعمال کرنے کی عادت ہے وہ ہر ٹائم اسی پر اپنا وقت ضائع کرتے رہتے ہیں۔