09:46 am
نارووال میں نئی نویلی دُلہن ہارٹ اٹیک سے انتقال کر گئی مگر جب غسل دیا جانے لگاتو ، لرزہ خیز خبر آگئی

نارووال میں نئی نویلی دُلہن ہارٹ اٹیک سے انتقال کر گئی مگر جب غسل دیا جانے لگاتو ، لرزہ خیز خبر آگئی

09:46 am

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ایک اور نوبیاتا دلہن کا قتل ہو گیا،حوا کی ايک اور بيٹی ظالم شوہر کے ظلم کا شکار بن گئی۔اس حوالے سے میڈیا رپورٹس میں بتایا گیاہے کہ میاں بیوی میں لڑائی تو عام بات ہے لیکن اکثر حوا کی بیٹیاں ایسی بھی ہیں جو سسرال جاتے ہی تشدد کا شکار بن جاتی ہیں۔نارووال میں بھی ایک ایسا ہی واقعہ پیش آیا ہے جہاں نئی نویلی دلہن پر سسرال میں عرصہ دراز تنگ کر دیا گیا۔ نارووال کے رہائشی محمد افضل نے اپنی بیٹی کی شادی قریبی گاؤں میں اپنے بھانجے سے کی تھی۔شادی کے کچھ عرصہ تک تو معاملات ٹھیک رہے۔تاہم اس کے بعد معمولی باتوں پر ہونے والے جھگڑے شدت اختیار کر گئے،27 رمضان المبارک کی رات مبشرہ کی والدہ گلناز بی بی نے اپنے داماد برہان کو فون کیا
اور بیٹی سے بات کروانے کے لیے کہا جس پر اس نےجواب دیا کہ آپکی بیٹی کو ہارٹ اٹیک ہوا ہے اور وہ وفات پا چکی ہے۔ بیٹی کی موت کی خبر سنتے ہی گھر والوں پر قیامت ٹوٹ پڑی اور وہ بھاگم بھاگ بیٹی کے سسرال پہنچے۔ والدہ بیٹی کی لاش سے لپٹ کر روتی رہی۔میڈیا رپورٹس میں مزید بتایا گیا ہے کہ مبشرہ کو تدفین سے قبل غسل ان کی والدہ اور بہنوں نے دیا۔ماں اور بہنوں پر مبشرہ کے جسم پر تشدد کے نشانات دیکھ کر ایک قیامت ٹوٹ پڑی۔تاہم لوگوں کی موجوگی کی وجہ خاموش رہے جس کے کچھ عرصہ بعد ہی لڑکی کے اہل خانہ نے وکلاء سے مشورہ کیا اور بعدازاں علاقہ مجسٹریٹ کو قبر کشائی کے لیے درخواست دے دی۔ میڈیا رپورٹس میں مزید بتایا گیا ہے کہ علاقہ مجسٹریٹ کی درخواست پر مشبرہ کی قبر کشائی کروا کر پوسٹ مارٹم کروایا جائے گا اور نمونے فرانزک لیبارٹری بھجوا دیے جائیں گے۔پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ پوسٹ مارٹم اور فرانزک رپورٹ آنے پر باقی کاروائی جائے گی۔مبشرہ کے والدین نے پولیس سے مطالبہ کیا ہے کہ کاروائی کر کے ملزمان کو گرفتار کیا جائے اور ہمیں انصاف فراہم کیا جائے۔