10:39 am
فیصل آباد میں 11 سالہ بچے سے اجتماعی زیادتی

فیصل آباد میں 11 سالہ بچے سے اجتماعی زیادتی

10:39 am

فیصل آباد(نیوز ڈیسک)فیصل آباد میں 11 سالہ لڑکے کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا۔اس حوالے سے ایک میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ فیصل آباد میں ایک افسوسناک واقعہ پیش آیا ہے جہاں 11 سالہ بچے کے ساتھ اجتماعی زیادتی کی گئی،بچے کے ساتھ زیادتی کے بعد اس کی ویڈیوز بھی بنائی گئی اور پانچ سال تک بلیک میل کیا جاتا رہا۔جب بچے کو بلیک میل کیا گیا اس وقت اس کی عمر صرف 11 سال تھی۔اس حوالے سے گذشتہ روز ترکھانی پولیس اسٹیشن میں مقدمہ بھی درج کر لیا گیا ہے
۔مذکورہ پولیس اسٹیشن پر پہلے ہی اسی نوعیت کے چار واقعات رپورٹ ہو چکے ہیں۔ایف آئی آر میں بتایا گیا ہے کہ محسن نامی ملزم اپنے پانچ دیگر ساتھیوں کے ساتھ مل کر گیارہ سالہ بچے کو اپنے گھر لے گیا جہاں اس سے مبینہ طور پر زیادتی کی گئی اور اس عمل کو فلمایا گیا۔جس کے بعد اگلے پانچ سال تک وہ اُس بچے کو اسی ویڈیو کی بنیاد پر بلیک میل کرتے رہے۔ملزمان نے بچے کو بلیک میل کرتے ہوئے پانچ سالوں کے دوران 65،000 روپے بھی وصول کیے۔دوسری صورت میں اسے دھمکی دی کہ وہ اس کی ویڈیوکلپ سوشل میڈیا پر ڈال دیں گے جس سے اس کی بدنامی ہو گی۔محسن اور اس کے ساتھیوں پر یہ پہلا مقدمہ دائر نہیں کیا گیا۔مذکورہ ملزمان اسی نوعیت کے متعدد مقدمات میں ملوث ہیں۔واضح رہے اس سے قبل چودہ سالہ بچے سے اجتماعی زیادتی کا و اقعہ بھی پیش آیا تھا جس میں پانچ ملزمان کو گرفتار کر کے مقدمہ درج کیا گیا تھا۔جب کہ دوسری جانب حال ہی میں چونیاں میں بھی 4 بچوں کو زیادتی کے بعد قتل کر دیا گیا۔اس سلسلے میں ایک شخص کو رحیم یار خان سے گرفتار بھی کیا گیا جس نے پولیس کے سامنے اپنے جرم کا اعتراف کر لیا۔ملزم کو اس کے والد کی نشاندہی پر گرفتار کیا گیا تھا۔