11:46 am
اگر بھارت نے پاکستان پر حملہ کیا تو سعودی عرب فوری طور پر کس ملک پر حملہ کردے گا

اگر بھارت نے پاکستان پر حملہ کیا تو سعودی عرب فوری طور پر کس ملک پر حملہ کردے گا

11:46 am

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) ملک کی موجودہ صورتحال، مقبوضہ کشمیر میں ڈھائے جانے والے بھارتی مظالم اور عالمی برادری کے رد عمل پر بات کرتے ہوئے کالم نگار مظہر برلاس نے کہا کہ عمران خان نے اپنی صلاحیتوں کا لوہا خود منوایا ہے۔ وہ انتھک ہیں، اسمارٹ ہیں، محنتی ہیں، دلیری سے موقف پیش کرنے کا ہنر رکھتے ہیں۔ انہوں نے اپنے کالم میں مودی کے امریکہ میں کیے گئے جلسے سے خطاب پر بات کرتے ہوئے کہا کہ جب جلسے میں مودی نے یہ کہا کہ ’’ہم نے کشمیر کے لئے آرٹیکل 370 ختم کر دیا ہے، کھڑے ہو کر میری تائید کرو‘‘ سب لوگ کھڑے ہوگئے مگر امریکی صدر اور دیگر امریکی اراکین بیٹھے رہے، افسوس پاکستان میڈیا اس ’’بیٹھک‘‘
کو لوگوں کے سامنے نہ لا سکا حالانکہ پاکستانی میڈیا کو یہ کہنا چاہئے تھا کہ امریکی قیادت نے آرٹیکل 370 پر مودی کے مؤقف کو مسترد کر دیا۔مظہر برلاس نے کہا کہ افسوسناک پہلو یہ ہے کہ ہزاروں خداؤں کے ماننے والے ایک ہو چکے ہیں اور ایک خدا کو ماننے والے تقسیم ہو چکے ہیں۔افسوسناک بات یہ ہے کہ پاکستانی، پاکستان کے لئے ایک نہیں ہوتے، یہی حال مسلمان ملکوں کا ہے۔ اس وقت یہود و ہنود کی چال کو سمجھنے کی ضرورت ہے، ان دونوں نے تین مسلمان ملکوں کے لئے ایک خوفناک منصوبہ تیار کیا ہے۔منصوبہ یہ ہے کہ جس وقت انڈیا، پاکستان پر حملہ کرے تو عین اسی وقت سعودی عرب کو ایران سے لڑوایا جائے تاکہ ایران خفیہ طور پر پاکستان کی مدد نہ کر سکے اور نہ ہی سعودی عرب ظاہری طور پر پاکستان کی مدد کر سکے۔ اسی طرح جنگ میں الجھا ہوا پاکستان اپنے برادر اسلامی ملک ایران کی کوئی مدد نہ کر سکے۔ مظہر برلاس نے بتایا کہ اس کے علاوہ پاکستان سعودی عرب کی بھی عسکری مدد نہ کر سکے۔ یہ تینوں ملک کسی ایک کی مدد نہ کر سکیں، اس دوران اسرائیل اپنے پائوں پھیلانے میں کامیاب ہو جائے، اس کی نظریں اردن کے علاوہ سعودی عرب کے کچھ حصے پر لگی ہوئی ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان سعودی عرب اور ایران کے مابین ثالثی کروانے میں کامیاب ہو گئے تو یہودیوں کا خواب بکھر جائے گا۔