01:07 pm
 وزیراعظم عمران خان کے جنرل اسمبلی سے تاریخی خطاب

وزیراعظم عمران خان کے جنرل اسمبلی سے تاریخی خطاب

01:07 pm

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)عمران خان کی تقریر کے دوران ہال میں موجود مسلمان رہنما آبدیدہ ہو گئے۔ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی اجلاس سے خطاب میں پاکستان اور مسلم امہ کی صحیح ترجمانی کی ہے۔ان کی یہ تاریخی تقریر آنے والے وقتوں تک یاد رکھی رکھی جائے گی۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر محمد فیصل نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی اجلاس کے دوران وزیراعظم پاکستان عمران خان کے خطاب پر اظہارِ خیال کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیراعظم کی تقریر کے دوران جب عمران خان نے نبی کریم ﷺ کا ذکر کیا تو ہال میں موجود تمام مسلم رہنماؤں کے آنسو جاری ہو گئے۔
ڈاکٹر فیصل نے کہا کہ عمران خان نے اقوام عالم کو نہ صرف پاکستان بلکہ پوری مسلم امہ کا درد بیان کیا۔یہ تقریر ایک بین الاقوامی رہنما کی تقریر ہے اور اسے آنے والے وقتوں تک یاد رکھا جائے گا۔جب کہ دوسری جانب زیراعظم کے تاریخی خطاب کے دوران جنرل اسمبلی میں موجود بھارتی نمائندوں کے اترے ہوئے چہروں نے بھارت کی شکست عیاں کر دی۔ وزیراعظم عمران خان کی جانب سے جمعہ کے روز اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس سے تاریخی خطاب کیا گیا۔وزیراعظم کے خطاب کے دوران اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں بھارت کی 2 خواتین نمائندگان بھی موجود تھیں۔ جبکہ پاکستان کی کامیاب خارجہ پالیسی اور وزیراعظم عمران خان کی پُراثر شخصیت کے سامنے بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی ڈھیر ہوگئے۔ بھارتی میڈیا پہلی بار مودی کی تقریر میں پاکستان کا ذکر نہ ہونے پر ہکا بکا رہ گیا۔نریندر مودی نے اقوام متحدہ میں اپنی تقریر میں ایک بار بھی پاکستان کا ذکر نہیں کیا۔ بھارتی وزیر اعظم ملک میں ٹوائلیٹ کی کمی اور سڑکوں کی تعمیر پر بی جے پی کی پالیسیاں بتاکر عالمی رہنماؤں کو بور کرتے رہے۔بھارتی وزیراعظم کی اس بھونڈی تقریر پر بھارتی میڈیا بھی پھٹ پڑا اور تنقید کے نشتر اپنے ہی وزیراعظم پر برسادیے۔ بھارتی میڈیا نے بھارتی بھانڈا پھوڑا کہ ایسا گزشتہ 8 سالوں میں پہلی بار ہوا ہے کہ کسی بھارتی وزیر اعظم یا وزیر خارجہ نے اقوام متحدہ میں تقریر کی ہو اور پاکستان کا ذکر تک نہ کیا ہو۔اس سے قبل سال2011 میں ایسا ہوا تھا کہ بھارت کی جانب سے جنرل اسمبلی میں کی جانے والی تقریر میں پاکستان کا ذکر نہیں تھا۔