02:12 pm
دنیا کشمیریوں کے ساتھ ہو یا نہ ہو لیکن پاکستانی قوم کشمیریوں کے ساتھ رہے گی

دنیا کشمیریوں کے ساتھ ہو یا نہ ہو لیکن پاکستانی قوم کشمیریوں کے ساتھ رہے گی

02:12 pm

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے امریکا سے وطن واپسی پر ایئرپورٹ پر ہی کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دنیا کشمیریوں کے ساتھ ہو یا نہ ہو لیکن پاکستانی قوم کشمیریوں کے ساتھ رہے گی۔اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں پاکستان کی بہترین نمائندگی کرتے ہوئے مسئلہ کشمیر احسن انداز سے اُجاگر کرنے کے بعد وزیراعظم عمران خان وطن واپس پہنچ تو پارٹی کارکنان نے ان کا شاندار استقبال کیا۔وزیراعظم پر
گل پاشی کی گئی جبکہ ان کے حق میں نعرے بازی بھی کی گئی، اس موقع پر کابینہ اراکین اور پارٹی رہنماؤں سمیت کارکنان کی بڑی تعداد موجود تھی۔ایئرپورٹ پر پارٹی کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے اقوام متحدہ میں کشمیر کا مقدمہ پیش کرنے کی ہمت دینے کے لیے دعا کرنے پر میں پوری قوم بالخصوصی اہلیہ بشریٰ بی بی کے مشکور ہیں۔انہوں نے کہا کہ دنیا کشمیریوں کے ساتھ ہو یا نہ ہو لیکن پاکستانی کشمریوں کے ساتھ ہیں، یہ جہاد ہے کیونکہ ہم نے اللہ تعالیٰ کو خوش کرنا ہے۔وزیراعظم نے کہا کہ پاکستانیوں کو مایوس ہونے کی ضروت نہیں ہے، ہمیں جدوجہد کرنی ہے اور کشمیری اپنی جدوجہد کرکے ایک دن آزادی حاصل کرلیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ میں کشمیریوں کا سفیر ہوں، پوری دنیا کے سامنے اس مودی اور فاشسٹ حکومت کو بے نقاب کریں گے۔وزیراعظم عمران خان گزشتہ روز وطن واپسی کے لیے نیو یارک سے جدہ کے لیے روانہ ہوئے تھے تاہم ان کے طیارے کو فنی خرابی کے باعث واپس نیویارک لینڈ کرا دیا گیا تھا۔بعدازاں وزیراعظم عمران خان کمرشل ائیر لائن کی پرواز کے ذریعے جدہ پہنچے اور پھر وہاں سے وطن واپسی کے لیے روانہ ہوئے۔اب وزیراعطم عمران خان سعودی ائیرلائن کی پرواز کے ذریعے اسلام آباد ائیرپورٹ پہنچ چکے ہیں، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی بھی وزیراعظم کے ہمراہ ہیں۔وزیراعظم کا جنرل اسمبلی سے خطاب، کشمیر میں مظالم اور بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کردیااسلام آباد پہنچنے پر وزیراعظم عمران خان کا شاندار استقبال کیا گیا اور اس موقع پر سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے۔ وفاقی وزراء، پارٹی رہنماؤں اور کارکنوں کی بڑی تعداد وزیراعظم عمران خان کا والہانہ استقبال کیا اور انہیں پھولوں کے ہار پہنائے۔ وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان، وزیر داخلہ اعجاز شاہ، وزیر ریلوے شیخ رشید، گورنر سندھ عمران اسماعیل، گورنر خیبر پختونخوا اور اسد عمر کے علاوہ کے پی کے کابینہ کے اراکین بھی وزیراعظم کے استقبال کے لیے ائیرپورٹ پہنچے۔وزیراعظم عمران خان نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں دنیا کے سامنے بھارت کا مکروہ چہرہ بے نقاب کیا اور مقبوضہ کشمیر سے کرفیو فوری ہٹانے کا مطالبہ کیا۔وزیراعظم عمران خان نے دنیا کو خبردار بھی کیا کہ اگر دو جوہری ممالک کے درمیان جنگ ہوئی تو پھر اس کے اثرات دنیا بھر تک پھیلیں گے۔

تازہ ترین خبریں