03:11 pm
وزیر اعلیٰ پنجاب نے اپنی ایک سال کی حکومت کی کامیابیاں گنوا دیں

وزیر اعلیٰ پنجاب نے اپنی ایک سال کی حکومت کی کامیابیاں گنوا دیں

03:11 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سینئر ملکی صحافی اور اینکر پرسن معید پیر زادہ نے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار سے ایک خصوصی انٹرویوکیا۔ جس میں ایک ان کی حکومت کی ایک سالہ کارکردگی اور ان کی تین چار اہم کامیابیوںسے متعلق سوالات کیے ۔ نجی ٹی وی چینل کے پروگرام کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے معیدپیرزادہ نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے سوال کیا کہ اگست 2018سے اب تک ایک سال سے زائد عرصے میں آپ کی حکومت کی جو تین چار بڑی بڑی کامیابیاں ہیں ، وہ ذرا عوام کو بتا نا پسند کریں گے۔اس پر عثمان بزدار نے کہا کہ سب سے پہلی بات یہ ہے کہ ہم نے وزیر اعلیٰ ہائوس کے اخراجات کو 60فیصد کم کردیا ہے۔ بالخصوص غیر ضروری پروٹوکول کا خاتمہ کیا گیا ہے۔ اس کے بعد ہم نے ایک سال میں 18کابینہ میٹنگز بلوائی ہیں جو کہ ایک ریکارڈ ہے۔ پھر قانون سازی کے حوالے سے ہم نے کافی پیشرفت کی ہے
اور پچاس سے زائدشعبوں میں قانون سازیاں کی گئی ہیں۔ اس پر معید پیرزادہ نے سوال کیا کہ کون کون سی قانون سازیاں ہوئیں ۔ اس پر عثمان بزدار کا کہناتھا کہ بہت ساری ہوئی ہیں۔ایک لمبی فہرست ہے۔اس میں صحت ہے۔ تعلیم ہے، جانوروں کی صحت ہے۔ سڑکیں ہیں اور بھی بہت سارے شعبے ہیں۔پھر آپ یہ دیکھیں کہ اسمبلی میںہر آدمی کی بات کو سنا جاتا ہے۔سب کو ساتھ لے کرچلا جاتا ہے ، ماضی کی طرح ایک آدمی کی بادشاہت نہیں ہے۔مکمل جمہوریت ہے۔ اس پراینکر نے سوال کیا کہ ان سب باتوں سے ایک عام آدمی کوکیاریلیف ملے گا یاکوئی عام آدمی یہ سب باتیں جان سکتا ہے،جس پر عثمان بزدار نے دعویٰ کیا کہ سب کو پتہ چل چکا ہے کہ پہلے کیا تھااور اب کیا ہے۔، کیونکہ مہنگائی تو بہت زیادہ ہوگئی ہے۔ آٹا ، چینی، گھی ،دالیں ،سبزیاں سب کچھ مہنگا ہوگیا ہے۔اس پر وزیر اعلیٰ پنجاب کا کہناتھا کہ ہم نے پندرہ کے قریب پرائس کنٹرول کمیٹیاں بنا دی ہیں وہ اپنا کام کر رہی ہیں ،کافی معاملات کنٹرول بھی ہوئے ہیں۔