08:49 am
 ملک میں یکساں نظام تعلیم اور نصاب کا نظام رائج کرنے کے لیئے دیر نہیں کرنی چائیے

ملک میں یکساں نظام تعلیم اور نصاب کا نظام رائج کرنے کے لیئے دیر نہیں کرنی چائیے

08:49 am

کراچی(نیوز ڈیسک )پاک سر زمین پارٹی کے رہنماء رضاء ہارون نے کہا ہے کہ ملک میں یکساں نظام تعلیم اور نصاب کا نظام رائج کرنے کے لیئے دیر نہیں کرنی چائیے وزیر اعظم آگے بڑھیں ہم ان کا ساتھ دیں گے بلکہ ہر پاکستانی ان کا ساتھ دے گا۔وہ ایشو آف دی ڈے میں گفتگو کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ گلی گلی میں ہر شحض نے اپنا سکول کھول رکھا ہے اور اپنا اپنا نظام تعلیم رائج کر رکھا ہے جو تباہی کا باعث بن رہا ہے ہر ایک حکومت اور افسر شاہی کے یہ علم میں ہے مگر افسوس کہ اس پر کوئی توجہ نہیں دے رہا۔یاد رہے وزیر اعظم عمران خان نے ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوۓ کہا تھا کہ ہ ایک ہی ملک میں تین تعلیمی نصاب چل رہے ہیں۔
انگریز کے تعلیمی نظام نے طبقاتی نظام کو جنم دیا۔ ایک قوم بننے کیلئے ایک نصاب ہونا چاہیے۔ گزشتہ روز اسلام آباد میں دینی مدارس کے زیرتعلیم طلبہ میں تقسیم انعامات کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا حضرت نبی آخرالزمان صلی اللہ علیہ وسلم نے درس دیا تھا کہ تعلیم حاصل کرو چاہے اس کیلئے چین جانا پڑے۔ مسلمانوں نے علم سے ترقی کی‘ تلوار سے نہیں‘ تعلیم میں کمی مسلمانوں کے زوال کی وجہ بنی۔ انہوں نے کہا کہ سات سو سال تک تمام سرفہرست سائنس دان مسلمان تھے‘ انگریزوں نے سوچ سمجھ کر مسلمانوں کا تعلیم کا نظام ختم کیا اور نظام تعلیم میں طبقات پیدا کئے‘ اسلام نے ہمیں انسان بننا سکھایا ہے‘ اسلام ہمیں انسانیت کا درس دیتا ہے اور دینی تعلیم ہی ہمیں راہ حق کے بارے میں بتاتی ہے۔ دینی تعلیم ہمیں یہ بھی بتاتی ہے کہ دنیا میں آنے کا مقصد کیا ہے اور دنیا سے جانے کے بعد ہمارے ساتھ کیا ہوگا۔ انہوں نے کہا‘ ہم نے فیصلہ کرلیا ہے کہ ہم دینی مدارس کے طلبہ کو دینی تعلیم کے ساتھ ساتھ ہنر بھی سکھائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیم کا مقصد صرف پیسہ بنانا نہیں‘ پاکستان‘ ترکی اور ملائشیا نے مل کر انگریزی ٹی وی چینل کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔ مسلمانوں کے انگریزی چینل سے دنیا کے مسلمانوں کو پیغام دینا ہے۔ ہمارے ہیروز پر فلمیں بنائی جائیں گی تاکہ بچوں کو معلوم ہو کہ خالد بن ولید کون تھے۔ انکے بقول اسلامی ممالک میں تعلیم ختم ہوئی تو مسلمان تنزلی کا شکار ہوگئے۔ ہماری کوشش ہے کہ تعلیمی نظام میں یکسانیت لا کر ترقی کی راہ ہموار کریں۔ وزیراعظم نے کہا کہ انگریزی اور اردو نظام تعلیم سے مدارس کو علیحدہ کرنا ناانصافی ہے۔ موجودہ نظام تعلیم میں اکثریت اوپر نہیں آسکی۔ انکے بقول سی پیک منصوبہ پاک چین دوستی کا مظہر ہے‘ اسکے تحت جاری منصوبوں میں رکاوٹیں دور کررہے ہیں۔