01:29 pm
وزیروں کی جانب سے بغیرتصدیق کیے شیئرکرنےپرحکومت کواس کا کتنانقصان ہوگا

وزیروں کی جانب سے بغیرتصدیق کیے شیئرکرنےپرحکومت کواس کا کتنانقصان ہوگا

01:29 pm

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک )کل سے سوشل میڈیاپرجمعیت علمائے اسلام کے لیٹرہیڈ پرجاری ایک جعلی خط گردش کررہاہے وہ خط فیس بک کی ایک پرسنیلٹی نے خودپرنٹ کرواکے جاری کیاجس کے بعدیہ وائرل ہوگیااوراس پربحث شروع ہوگئی جب یہ بات زیادہ پھیلی توجمعیت علمائے اسلام نے معاملے کی نزاکت کودیکھتے ہوئے میدان میں آکرکہاکہ یہ ہدایت نامہ فیک(جھوٹا) ہے۔انہوں نے کہاکہ جعلی ہدایت نامہ بدمعاش پی ٹی آئی والوں کا جھوٹا پراپیگنڈہ ہے۔ کارکن اس کو شیئر مت کریں۔
انہوں نے کہاکہ واٹس ایپ اورفیس بک پرہدایت نامے کے حوالے سے ایک کاغذگردش کررہاہےیہ سارے کاسارابکواس ہےتحریک انصاف کے بدمعاش لوگوں نے یہ کاغذ فیس بک پرچڑھایاہےاس سے جمعیت علمائے اسلام کاکوئی تعلق نہیںہمارے کارکن اس کوشیئرنہ کریںنہ اس کاکوئی نوٹس لیںاوران بدمعاشوں نے ہمیشہ مولانافضل الرحمٰن کے حوالے سے بھی بکواس کیے ہیں۔لہٰذاکارکن اس قسم کے پروپیگنڈوں پرکان نہ دھریںبلکہ اپناکام جاری رکھیں یہ لوگ اپنی موت دیکھ رہے ہیں۔اس لیے مختلف قسم کے الزامات اوربکواس شروع کردئیے ہیں۔وفاقی وزیرسائنس وٹیکنالوجی سمیت تحریک انصاف کے متعددرہنمائوں کواس خط کے جعلی ہونے کامعلوم تھالیکن اس کے باوجودوہ اس کامذاق اڑاتے رہے اوراس جعلی لیٹرکوپرموٹ کرتے رہے۔فوادچوہدری نے ٹوئٹ کرتے ہوئے لکھاکہ چھ نمبرہدایت سے تولگ رہاہے کہ دھرناایمسٹرڈیم یاسان فرانسسکوکی پنک موومنٹ کاحصہ ہے ۔کمال ہی کے ارادے ہیں۔وزیروں کی جانب سے بغیرتصدیق کیے اس کوری ٹوئٹ کرنے سے ان کادنیابھرمیں مذاق بنایاجارہاہے اوراس کانقصان عمران خان اورتحریک انصاف کی حکومت کوہوگا۔