06:08 pm
”فضل الرحمان امامت کروائیں گے اور پوری قوم ان کے پیچھے نماز پڑھے گی“

”فضل الرحمان امامت کروائیں گے اور پوری قوم ان کے پیچھے نماز پڑھے گی“

06:08 pm

لاہور(نیوز ڈیسک) کوٹ لکھپت جیل لاہور میں سابق وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات کے بعد ان کے داماد کیپٹن (ر) صفدر نے مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ میں شرکت سے متعلق واضح اعلان کردیا۔نوازشريف سے ملاقات کے بعد جیل کے باہر کيپٹن (ر)صفدرکا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ جو بھی نواز شريف سے پيارکرتا ہے وہ دھرنے ميں جائے گا۔کیپٹن صفدر کے مطابق نواز شریف نے پیغام بھیجا ہے کہ تمام تر مسلم لیگ مولانا فضل الرحمن کے مارچ میں بھرپور طریقے سے شرکت کرے۔ کیپٹن صفدر نے میڈیا سے بات میں مزید کہا کہ فضل الرحمان امامت کروائیں گے اور پوری قوم ان کے پیچھے نماز پڑھے گی میں اس حکومت کو بنتے ہی نہیں
دیکھ رہاتھا۔دوسری جانب نواز شریف سے آج صدر ن لیگ شہباز شریف کی طے شدہ ملاقات بھی شہباز شریف کی طبیعت ناساز ہونے کی بناء پر منسوخ ہوگئی۔ ملاقات میں آزادی مارچ میں شرکت کے حوالے سے اہم مشاورت کی جانی تھی۔خیال رہے کہ ن لیگ کی کمیٹی نے دھرنے میں شرکت کا معاملہ تاحیات قائد نوازشریف پر چھوڑ رکھا تھا اور آج نواز شہباز ملاقات سے حتمی فیصلے کی امید کی جارہی تھی۔دوسری جانب ذرائع نے خبر دی ہے کہ صدر مسلم لیگ ن شہباز شریف کمر درد کے باعث آج کوٹ لکھپت جیل نہیں جائیں گے اور ڈاکٹرز کی ہدایت کے باعث آرام کر رہے ہیں۔ذرائع کے مطابق نوازشریف، اور مریم نواز مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ میں بھرپور شرکت کے حامی ہیں جبکہ شہباز شریف آزادی مارچ میں پارٹی کے وفد کی سطح پر شرکت کے حامی ہیں۔