02:19 pm
پوری دنیاترکی کے خلاف لیکن پاکستان ترکی کا ساتھ دے رہا ہے

پوری دنیاترکی کے خلاف لیکن پاکستان ترکی کا ساتھ دے رہا ہے

02:19 pm

انقرہ (ویب ڈیسک )اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے 5یورپی ارکان نے ترکی سے شامی کردملیشیاکے خلاف حملےروکنے کامطالبہ کردیا۔تفصیلات کے مطابق فرانس، جرمنی، برطانیہ، بیلجیئم اور پولینڈ نے ہنگامی اجلاس کے بعد جاری کیے گئے مشترکہ اعلامیے میں کہا کہ ’ہم شام کے شمال مشرقی علاقے میں ترک فوجی آپریشن کے باعث تشویش میں مبتلا ہیں‘۔اعلامیے میں کہا گیا کہ ’ہم ترکی سے یکطرفہ فوجی کارروائی روکنے کا مطالبہ کرتے ہیں کیونکہ ہم نہیں سمجھتے کہ اس سے ترکی کے سیکیورٹی خدشات کی ترجمانی ہورہی ہے‘۔ترک آپریشن کامقصد’سیف زون‘کاقیام ہے جس میں دس لاکھ شامی پناہ گزینوں کوترکی سے وطن واپس لایاجاسکے
۔یورپی ممالک کے مطابق ایساممکن نہیں کہ شام کے شمال مشرقی علاقے میں ترکی کی جانب سے تصورکردہ سیف زون کے اقوام متحدہ پناہ گزین ایجنسی کی جانب سے پناہ گزینوں کی واپسی کے لیے طے کردہ بین الاقوامی ہدف کوپوراکرے گا۔سلامتی کونسل کو 2 روز قبل لکھے گئے خط میں انقرہ نے کہا تھا کہ اقوام متحدہ کے منشور کے آرٹیکل 51 کے مطابق اپنے دفاع کے حق کے تحت آپریشن کیا جارہا ہے تاکہ دہشت گردوں کو غیرجانبدار کرنے، ترکی کی سرحد کی حفاظت یقینی بنانے اور دہشت گردی کے خدشات کا مقابلہ کیا جاسکے۔دوسری طرف ترک صدر23اکتوبرکوپاکستان آرہے ہیں اورچالیس سالوں میں یہ پہلی دفعہ ہے کہ ترکی کوانٹرنیشنل سطح پرکارروائی کی پاکستان کی جانب سے حمایت حاصل ہے دوسری جانب پوری دنیاترکی کے اس آپریشن کے خلاف ہوگئی ہے امریکانے ترکی کوسنگین نتائج کی دھمکی دیدی ہے ایران بھی ترکوں کے خلاف بول رہاہے جبکہ اسرائیل نے ترکی کے خلاف کردوں کی حمایت کااعلان کردیاہے ۔

تازہ ترین خبریں