12:33 pm
مولانافضل الرحمن نےنوٹوں سے بھرا بریف کیس واپس کردیا، جانتے ہیں یہ بیک انہیں کس نے دیا تھا

مولانافضل الرحمن نےنوٹوں سے بھرا بریف کیس واپس کردیا، جانتے ہیں یہ بیک انہیں کس نے دیا تھا

12:33 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)مولانافضل الرحمن نےنوٹوں سے بھرا بریف کیس واپس کردیا، جانتے ہیں یہ بیک انہیں کس نے دیا تھا ۔۔۔سینئرصحافی و تجزیہ کار حامد میر نے مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ مولانا فضل الرحمان کو آپ ڈیزل کہیں یا حلوہ خور لیکن 2008ء میں مشرف حکومت کے وزیر قانون جسٹس (ر) سید افضل حیدر اپنی کتاب میں لکھتے ہیں کہ ایک دفعہ انہیں آئی ایس آئی کے افسر میجر جنرل نصرت نعیم نے بتایا کہ وہ نوٹوں سے بھرا بریف کیس مولانا کے پاس چھوڑ آئے
لیکن مولانا نے یہ واپس کر دیا۔خیال رہے کہ جمعیت علمائے اسلام (ف) کی جانب سے 27 اکتوبر کو سندھ سے شروع ہونا والا ''آزادی مارچ'' آج نصف شب اپنی منزل مقصود یعنی اسلام آباد کے سیکٹر H-9 میں واقع جلسہ گاہ پہنچ گیا ہے۔ شرکا سے اپنے انتہائی مختصر خطاب میں مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ مارچ کا ''باقاعدہ افتتاح'' آج بعد از نماز جمعہ ہو گا، جس کے بعد وہ اپنے مطالبات پیش کریں گے۔اس وقت اسلام آباد کی کشمیر ہائی وے کے ارد گرد ہر طرف مارچ کے شرکا ہی نظر آ رہے ہیں۔ پشاور موڑ پر جمیعت علمائے اسلام (ف) کے مقررین نے خطاب میں کہا کہ اصل جلسہ جمعے کی نماز کے بعد ہوگا۔ اپوزیشن کی رہبر کمیٹی اور حکومت کے درمیان معاہدہ طے پایا تھا کہ اپوزیشن اسلام آباد کے ایچ 9 گراؤنڈ میں جلسہ کرے گی۔ دوسری جانب اسلام آباد کے ایچ ایٹ گراؤنڈ میں آزادی مارچ کے شرکا کے لیے میڈیکل کیمپز بھی لگائے گئے ہیں۔یہ میڈیکل کیمپز مختلف نجی فلاحی اداروں کے ساتھ ساتھ آزادی مارچ کے منتظمین کے زیر انتظام لگائے گئے ہیں۔ شرکا سے اپنے انتہائی مختصر خطاب میں مولانا فضل الرحمان نے اپنی جماعت اور دیگر سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں اور کارکنان کا طویل سفر طے کر کے اسلام آباد آنے پر شکریہ ادا کیا۔ مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ آج جمعے کی نماز پنڈال ہی میں ادا کی جائے گی اور اس کے بعد آزادی مارچ کا باقاعدہ آغاز ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ مارچ کے باقاعدہ آغاز کے بعد وہ اپنے مطالبات پیش کریں گے۔

تازہ ترین خبریں