06:32 am
مولانا فضل الرحمن وزیراعظم کے استعفے کے مطالبے سے پیچھے ہٹ گئے،چوہدری برادران سے ملاقات میں نیا مطالبہ سامنے رکھ دیا

مولانا فضل الرحمن وزیراعظم کے استعفے کے مطالبے سے پیچھے ہٹ گئے،چوہدری برادران سے ملاقات میں نیا مطالبہ سامنے رکھ دیا

06:32 am

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) امیر جمعیت علمائے اسلام (ف) مولانا فضل الرحمان نے چودھری برادران سے ملاقاتوں سے متعلق بات کرتے ہوئے کہا کہ چودھری برادران کی پاکستان کی سیاست میں ایک خاص حیثیت ہے۔ ہماری کوشش ہے کہ ہم چودھری برادران کو اس بات پر قائل کرلیں کہ آئندہ تین ماہ میں نئے انتخابات کروانے کے لیے حکومت کو آمادہ کریں۔حکومت کی جانب سے تشکیل دی جانے والی مذاکراتی کمیٹی سے متعلق مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ حکومتی کمیٹی انتہائی کمزور ہے جو ہمارے مطالبات اپنی قیادت تک نہیں پہنچا سکتی
۔ انہوں نے واضح کیا کہ یہ ایک طے شدہ عمل ہے جس پر رعایت نہیں دی جا سکتی کہ یہ ایک دھاندلی کی حکومت ہے جسے مزید وقت نہیں دیا جاسکتا۔ انہوں نے کہا کہ تاحال حکومت کے ساتھ کسی بھی معاملے پر کوئی پیشرفت نہیں ہوئی ۔واضح رہے کہ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے اعلان کر رکھا ہے کہ وہ حکومت کے خاتمے تک اسلام آباد سے واپس نہیں جائیں گے۔ دوسری جانب ذرائع کا دعویٰ ہے کہ جمیعت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان اس وقت کسی بڑی یقین دہانی اور گارنٹی کے منتظر ہیں۔ اس حوالے سے ذرائع نے کہا کہ مولانا فضل الرحمان کو حکومتی کمیٹی کے ایک یا دو ممبران کے سوا کسی پر اعتماد نہیں ہے اوریہی وجہ ہے کہ مولانا فضل الرحمان حکومتی پیشکش پر تاحال مطمئن نہیں ہیں اور مسلسل رہبر کمیٹی کو انگیج رکھ کر دباؤ بڑھانا چاہتےہیں۔ذرائع کے مطابق مولانا فضل الرحمان مسلسل رہبر کمیٹی کو انگیج رکھ کر حکومت پر دباؤ بڑھانا چاہتے ہیں۔ واضح رہے کہ کراچی سمیت ملک بھر سے شروع ہونے والا مولانا فضل الرحمان کا آزادی مارچ اس وقت اسلام آباد میں کشمیر ہائی وے پر موجود ہے۔ آزادی مارچ کے شرکا مولانا فضل الرحمان کی کال پر اسلام آباد آئے جہاں وہ سات روز سے موجود ہیں۔

تازہ ترین خبریں

ڈیل نہیں مجبوری، وزیر اعظم عمران خان نے اچانک نواز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے کیوں نکالا، حامد میر کا تہلکہ خیز انکشاف

ڈیل نہیں مجبوری، وزیر اعظم عمران خان نے اچانک نواز شریف کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ سے کیوں نکالا، حامد میر کا تہلکہ خیز انکشاف

معاملات بند گلی میں پہنچ گئے ،فضل الرحمٰن ،عمران خان میں سے کسی ایک کی سیاست ختم یاپورانظام لپیٹ دیاجائیگا

معاملات بند گلی میں پہنچ گئے ،فضل الرحمٰن ،عمران خان میں سے کسی ایک کی سیاست ختم یاپورانظام لپیٹ دیاجائیگا

اسپتال میں نواز شریف کو کچھ ہوتا تو حکومت ذمہ دار ہوتی لیکن اگرجاتی امراء میں سابق وزیراعظم کو کچھ ہوگیا تو ذمے دار کون ہوگا،ایک نیا معمہ بن گ

اسپتال میں نواز شریف کو کچھ ہوتا تو حکومت ذمہ دار ہوتی لیکن اگرجاتی امراء میں سابق وزیراعظم کو کچھ ہوگیا تو ذمے دار کون ہوگا،ایک نیا معمہ بن گ

فضل الرحمن نےنواز شریف اور آصف زرداری کی گرفتاری کو ناجائز عمل قرار دیدیا

فضل الرحمن نےنواز شریف اور آصف زرداری کی گرفتاری کو ناجائز عمل قرار دیدیا

جو ملک چلاناجانتے ہیں ان کو جیلوں میں ڈال دیا گیا ہے اور نااہل کو حکومت عطاکردی گئی ہے،فضل الرحمن

جو ملک چلاناجانتے ہیں ان کو جیلوں میں ڈال دیا گیا ہے اور نااہل کو حکومت عطاکردی گئی ہے،فضل الرحمن

اکرم درانی کی باری بھی آگئی، نیب نے رہبر کمیٹی کے کنوینر کو طلب کرلیا

اکرم درانی کی باری بھی آگئی، نیب نے رہبر کمیٹی کے کنوینر کو طلب کرلیا

گلے شکوے اپنائیت کی علامت ہوتی ہے دشمنی کی نہیں، مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ میں’’ پاک فوج زندہ باد‘‘ کے نعرے

گلے شکوے اپنائیت کی علامت ہوتی ہے دشمنی کی نہیں، مولانا فضل الرحمان کے آزادی مارچ میں’’ پاک فوج زندہ باد‘‘ کے نعرے

فضل الرحمن وزیراعظم ہائوس کا گھیرائو کرکے ایسا کیا کام کرنیوالے ہیں کہ حکومت ایک طرف ہوکر معاملہ اداروں پر چھوڑ دے گی

فضل الرحمن وزیراعظم ہائوس کا گھیرائو کرکے ایسا کیا کام کرنیوالے ہیں کہ حکومت ایک طرف ہوکر معاملہ اداروں پر چھوڑ دے گی