04:13 pm
  سی پیک  منصوبے سے متعلق امریکی   بیان  مسترد، اندرونی معاملات میں مداخلت قرار

سی پیک منصوبے سے متعلق امریکی بیان مسترد، اندرونی معاملات میں مداخلت قرار

04:13 pm

اسلام آباد ( آ ن لائن ) سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خارجہ امور نے پاک ، چین اقتصادی راہداری منصوبے سے متعلق امریکہ کے بیان کو متفقہ طور مسترد کرتے ہوئے اسے ملک کے اندرونی معاملات میں مداخلت قراردیا ۔ اجلاس کے دوران وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے راکین کمیٹی کو مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال اور وزارت خارجہ کی طرف سے نہتے کشمیریوں پر جاری مظالم کو بین الاقوامی فورمز پر اجاگر کرنے کی کاوشوں سے آگاہ کیا اور اس سے متعلق اپوزیشن جماعتوںکو اعتماد لینے پر اتفاق کیا۔ چیئرمین کمیٹی سینیٹر مشاہدحسین کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس کے دوران وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کمیٹی کو مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال اور وزارت خارجہ کی
جانب سے نہتے کشمیریوں پر جاری مظالم کو بین الاقوامی فورمز پر اجاگر کرنے کے لیے کی جانے والی کاوشوں سے آگاہ کیا ۔ انہوںنے کہا کہ اس سے متعلق اپوزیشن جماعتوں کو اعتماد میں لیا جائے گا۔وزیر خارجہ نے کمیٹی کو بتایا کہ بطور وزیر خارجہ انہوںنے صدر سیکورٹی کونسل، صدر جنرل اسمبلی اور سیکرٹری جنرل اقوام متحدہ کو لکھے گئے خطوط کی تفصیلات سے بھی کمیٹی کو آگاہ کیا، انہوںنے کہا کہ وزارت خارجہ نے بیرونی ممالک میں موجود سفارت خانوں کے ذریعے اب تک 400 روابط کر چکے ہیں اور مقبوضہ کشمیر میں جاری مظالم کو بین الاقوامی سطح پر پہنچا رہے ہیں ۔ اقوام متحدہ کے اجلاس کے دوران او آئی سی کنٹکٹ گروپ کے اجلاس میں بھرپور انداز میں مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کو اجاگر کیا گیا ۔ اس کے علاوہ امریکہ، برطانیہ اور دیگر ممالک میں مقیم کشمیریوں نے اپنے روابط کے ذریعے اپنے حق خودارادیت کی آواز امریکی کانگریس اور دیگر فورمز تک پہنچایا۔آج مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر یورپی یونین، امریکی کانگریس، فرنچ پارلیمنٹ سمیت دنیا بھر میں زیر بحث ہے جو ہماری سفارتی کاوشوں کا مظہر ہے ۔برطانیہ میں الیکشن کمپین کے دوران کشمیر پر بات ہو رہی ہے جو بہت حوصلہ افزا امر ہے ۔ہم مقبوضہ جموں و کشمیر کے نہتے کشمیریوں کو بھارتی استبداد سے نجات دلانے اور ہندوستان کے جھوٹے پروپیگنڈہ کو بے نقاب کرنے کے لیے ہر فورم پر جائیں گے۔ہم نے ہندوستان کی طرف سے دراندازی کے جھوٹے الزامات کو بے نقاب کرنے کیلئے پوری ڈپلومیٹک کور کو ان جگہوں پر لے گئے جن کی طرف بھارت نے اشارہ کیاہم بین الاقوامی سیمینار کے انعقاد کا فیصلہ کر چکے ہیں جس میں ہم دنیا بھر سے ماہرین، ڈپلومیٹس کو مدعو کریں گے جس کے ذریعے ہم دنیا کو مقبوضہ کشمیر سے متعلق اصل حقائق سے آگاہ کرنا چاہتے ہیں ۔اسلاموفوبیا کے خلاف ملائشیا، ترکی اور قطر کے ساتھ مل کر مشترکہ لائحہ عمل طے کر رہے ہیں تاکہ اسلام کا اصل تشخیص دنیا کے سامنے لایا جا سکے ۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان خطے میں قیام امن کیلئے سہولت کاری کا کردار ادا کرتے رہیں گے ۔ کرتارپور راہداری کھولنے پر دنیا بھر کے 14 کروڑ سکھوں نے پاکستان کا شکریہ ادا کیا ۔اراکین سینٹ قائمہ کمیٹی برائے امور خارجہ نے مقفصل بریفنگ پر وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کیا۔

تازہ ترین خبریں