01:33 pm
آرمی چیف کی مدت ملازمت کا معاملہ طے ہو تے ہی قبل از وقت انتخابات کے حوالے اہم خبر آگئی

آرمی چیف کی مدت ملازمت کا معاملہ طے ہو تے ہی قبل از وقت انتخابات کے حوالے اہم خبر آگئی

01:33 pm

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) سپریم کورٹ کی جانب سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی مدت ملازمت میں دی جانے والی مشروط توسیع کے معاملے پر سینئیر صحافی و تجزیہ کار مبشر لقمان نے مایکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ اب میں اس پر قائل ہو گیا ہوں کہ ملک قبل از وقت انتخابات کی جانب گامزن ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ چھ سے آٹھ ماہ تک حکومت شیڈول پیش کر دے گی جس سے پوری اپوزیشن کو ایک زبردست دھچکا ملے گا۔
خیال رہے کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی مدت ملازمت میں توسیع کا معاملہ سپریم کورٹ میں آنے پر مبشر لقمان نے حالات سنگین ہونے کی پیشن گوئی کی تھی۔ گذشتہ روز بھی اپنے پیغام میں سینئیر صحافی و تجزیہ کار مبشر لقمان نے کہا تھا کہ آئندہ دنوں میں حالات مزید مشکل ہو جائیں گے ۔ حالات کے اس طرح تبدیل ہونے پر بے حد افسوس ہے۔ انہوں نے کہا کہ حالات کا اس طرح تبدیل ہونا ہم سب کے لیے ہی اچھا نہیں ہے۔ یاد رہے کہ آج سپریم کورٹ نے آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے معاملے پر ریاض حنیف راہی کی جانب سے دائر کی جانے والی درخواست نمٹا دی اور آرمی چیف کی مدت ملازمت میں چھ ماہ کی مشروط توسیع دیتے ہوئے معاملہ پارلیمنٹ کے حوالے کر دیا۔ چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے آج عدالت میں کہا کہ ابھی مختصر فیصلہ سنا رہے ہیں ۔ کیس کا تفصیلی فیصلہ بعد میں جاری کیا جائے گا۔ عدالت نے یہ بھی کہا کہ حکومت نے یقین دلایا ہے کہ چھ ماہ میں قانون سازی کر لی جائے گی۔ تحمل کا مظاہرہ کرتے ہوئے معاملہ پارلیمنٹ پر چھوڑتے ہیں۔ آرمی چیف کی مقررہ تقرری چھ ماہ کے لیے ہو گی۔