08:03 pm
اگریہ کام جاری رہاتوقمرباجوہ کی جگہ نئے آرمی چیف  آئیں گے ،سینئرقانون دان اعتزازاحسن نے خبردارکردیا

اگریہ کام جاری رہاتوقمرباجوہ کی جگہ نئے آرمی چیف آئیں گے ،سینئرقانون دان اعتزازاحسن نے خبردارکردیا

08:03 pm

لاہور(ویب ڈیسک)سینئرقانون دان اعتزازاحسن نے کہاہے کہ عدالت پارلیمنٹ کوحکم نہیں دے سکتی ،حکومت اوراپوزیشن میں ڈیڈ لاک رہاتونئے آرمی چیف آئیں گے ،پارلیمنٹ میں نمبرگیم پرفیصلہ ہوگا۔ان خیالات کااظہارانہوں نے نجی ٹی وی چینل سے گفتگوکرتے ہوئے کیاانہوں نے کہاکہ آرمی چیف کی مدت ملازمت کاتعین ہوتاہی نہیں ہے۔
اس مسئلے پرلارجر بنچ بنناچاہیے تھا۔انہوں نے کہاکہ عدالت پارلیمنٹ کوحکم نہیں دے سکتی ۔آرمی چیف کے عہدے کے مدت کاتعین پارلیمنٹ کرتی ہے ،آرمی چیف اپنی مدت لکھواکرنہیں لاتا۔یہ عدالتی اختیار نہیں ہے ، اس پر سیر حاصل بحث ہونی چاہئے تھی ۔اعتزاز احسن کاکہناتھاکہاس معاملے پر 15سے بیس دن بحث ہونی چاہئے تھی ، ہمارے ہاں بدقسمتی سے یہ طریقہ کار بن گیاہے کہ ہر جج اپنا ایک ویژن اورایجنڈا لیکر آتاہے ۔ انہوں نے کہا کہ اب اگر حکومت اور اپوزیشن میں ڈیڈ لاک رہا تو نئے آرمی چیف آئیں گے ، پارلیمنٹ میں نمبر گیم پرفیصلہ ہوگا ۔ انہوں نے کہاکہ چیف جسٹس آصف سعیدکھوسہ بہت اچھے جج ہیں۔یہ مقدمہ تین چار دن سناگیا ، اس میں کوئی فریق نہیں تھا ۔