04:59 pm
 چیف الیکشن کمشنر  کا تقرر،وزیر اعظم عمران خان نے تین نام اپوزیشن لیڈر کو بھجوا دئیے

چیف الیکشن کمشنر کا تقرر،وزیر اعظم عمران خان نے تین نام اپوزیشن لیڈر کو بھجوا دئیے

04:59 pm

اسلام آباد (آن لائن ) چیف الیکشن کمشنر کی تقرری کیلئے وزیر اعظم عمران خان نے تین نام اپوزیشن لیڈر کو بھجوا دئیے ہیں ،الیکشن کمیشن کے ممبران سندھ اور بلوچستان کی تقرری کے حوالے سے پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس بے نتیجہ ختم ہوگیا ہے مزید مشاورت پیر کے روز ہوگی،حکومت اور اپوزیشن رہنمائوں نے معاملہ اگلے ہفتے کے دوران حل ہونے کی امید ظاہر کی ہے ۔ جمعہ کے روز چیف الیکشن کمشنر اور الیکشن کمیشن کے دو ممبران کی تقرری کے سلسلے
میںپارلیمانی کمیٹی کا اجلاس کی زیر صدارت چئیر پرسن شیریں مزاری ہوا اجلاس میں حکومت اور اپوزیشن اراکین کے مابین چیف الیکشن کمشنر سمیت ممبر سندھ اور بلوچستان کی تقرری کے حوالے سے مشاورت ہوئی تاہم حکومت اور اپویشن کے اراکین کسی حتمی نتیجے پر نہ پہنچ سکے اوراجلاس کا ایک بار پھر بے نتیجہ ختم ہوگیا ہے جس کے بعد اب پارلیمانی کمیٹی کا اجلاس پیر کو ہوگاجس میں حکومت اور اپوزیشن کی جانب سے چیف الیکشن کمشنر کیلئے نئے نام پیش کئے جائیں گے اجلاس کے بعد وفاقی وزیر پارلیمانی امور اعظم سواتی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہاکہ ہماری کوشش ہے کہ بلوچستان یا سندھ میں سے ایک نام حکومت اور ایک اپوزیشن سے ہو اور اس پر اتفاق رائے پیدا کررہے ہیں انہوں نے کہاکہ حکومت چاہتی ہے کہ چیف الیکشن کمشنر کے نام پر حکومت اور اپوزیشن کے مابین مکمل اتفاق رائے ہوا انہوںنے کہاکہ چیف الیکشن کمشنر کیلئے حکومت نے اپنا نام پیش کردیا ہے تاہم ابھی تک یہ نام اپوزیشن کو نہیں دیا گیا ہے اور اس پرپیر کے روز اجلاس میں مشاورت ہوگی انہوں نے کہاکہ اگر پیر کے روز اجلاس میں حکومت اور اپوزیشن کے مابین اتفاق رائے نہ ہوسکا تو منگل کے روز دوسرے فارمولے پر جائیں گیانہوںنے کہاکہ چیف الیکشن کمشنر اور ممبران کی تقرری میں بہت تاخیر ہوچکی ہے اور اب اتفاق رائے پیدا ہوجانا چاہیے اس موقع پر سینیٹر مشاہد اللہ نے کہاک کہ ابھی تک حکومت نے اپنے نام نہیں دیے ہیںتاہم امید ہے کسی نتیجے پر پہنچ جائیں گے انہوں نے کہاکہ حکومت کے نام ملنے کے بعد اپوزیشن اپنے نام دے گی ہم اتفاق رائے کے قریب ہیںامید ہے کہ سوموار کے روز ہونے والے اجلاس میں فیصلہ ہو جائے گا میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے چیف الیکشن کمشنر کی تعیناتی کیلئے اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کو 3نام بھجوا دئیے ہیں اپوزیشن لیڈر کو بھجوائے جانے والے ناموںمیں وفاقی سیکرٹریز کے عہدوں پر تعینات جمیل احمد ،فضل عباس میکن اور سکندر سلطان راجہ شامل ہیں رپورٹس کے مطابق وزیر اعظم نے اپوزیشن لیڈر کے نام لکھے جانے والے خط میں لکھا ہے کہ وہ چیف الیکشن کمشنر کی تعیناتی کا زیر التوا معاملہ حل کرنا چاہتے ہیں ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن کے سندھ سے ممبر کے لیے نثار درانی کے نام اہم قرار دیا جا رہا ہے نثار درانی کا نام پیپلز پارٹی نے تجویز کر رکھا ہے جبکہ بلوچستان سے ممبر الیکشن کمیشن کے لئے شاہ محمود جتوئی کا نام سامنے آیا ہے ذرائع کے مطابق ممبر بلوچستان کا نام جے یو آئی ف نے تجویز کیا ہے ذرائع کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن نے دونوں ممبران کے ناموں پر رضامندی کا اظہار کیا ہے حکومت اور اپوزیشن کے درمیان طے شدہ فارمولے کے تحت چیف الیکشن کمشنر حکومتی نامزد کردہ امیدوار ہو گا جبکہ سندھ اور بلوچستان کے ممبران اپوزیشن کے نامزد کردہ ہوں گے