08:44 am
میرا جسم میری مرضی کا نعرہ لگانےو الی خواتین کو خلیل الرحمٰن قمر نے لتاڑ کر رکھ دیا، کیا کہہ ڈالا

میرا جسم میری مرضی کا نعرہ لگانےو الی خواتین کو خلیل الرحمٰن قمر نے لتاڑ کر رکھ دیا، کیا کہہ ڈالا

08:44 am

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )خلیل الرحمان قمر کا فضاء علی کیساتھ ایک کلپ سوشل میڈیا پر بہت مقبول ہورہا ہے کہ جس میں وہ “میرا جسم میری مرضی ” کا نعرہ لگانیوالی خواتین کو لتاڑرہے ہیں۔خلیل الرحمان قمر کا کہنا تھا کہ یہ 35، 36 عورتیں ہیں جو میرے معاشرے کو اپنے مفاد کیلئے کسی نہ کسی طرح Captureکرنا چاہتی ہیں۔ ہماری مذہبی اقدار ہیں۔ میرا جسم میری مرضی۔۔ یہ کیا ہے؟ کیا ہم پھر اس زمانے میں چلے جائیں جب بازار حسن میں میرا جسم میری مرضی والی عورتیں قید کردی
جاتی تھیں؟ خلیل الرحمان قمر کا مزید کہنا تھا کہ یہ عورتیں مرد کو گالی دیکر میرے معاشرے کا بیڑہ غرق کرنا چاہتی ہیں۔ دکھایا جارہا ہے کہ مرد ماررہا ہے ڈرامے میں۔۔ مرد کو گالی دی جارہی ہے ۔ مرد کوئی پاگل ہے؟ مرد کیا کوئی پاگل خانے سے نکل کر آیا ہے؟ خلیل الرحمان قمر نے مزید کہا کہ مرد کے صرف پیدا ہونے کی خوشی ہوتی ہے اسکے بعد وہ مرتے دم تک کسی نہ کسی شکل میں عورت کی خدمت کرتا رہتا ہے۔ پیدا ہوا، 16 سال پڑھا، بسوں، ویگنوں میں دھکے کھائے، اسکے بعد وہ ماں کی خدمت کرتا ہے۔ اسے پہلی بات یہ سکھائی جاتی ہے کہ ماں کا ادب کرنا ہے۔ وہ پہلی تنخواہ ماں کی ہتھیلی پر رکھتا ہے۔۔ کون ہے ماں؟ ایک عورت۔۔اسکے بعد جب وہ کمانے کی عمر تک پہنچتا ہے تواسکی بہنیں جوان ہوجاتی ہیں۔بہنیں کون ہیں؟ عورت ۔۔ اس سے فارغ ہوتا ہے تو اس نے شادی کرنی ہوتی ہے۔۔ بیوی کون ہے؟ عورت۔۔ شادی کے بعد اسکی بیٹیاں ہوتی ہیں۔۔ وہ بیٹیوں کے پیدا ہوتے ہی اسکی شادی کی فکر میں لگ جاتا ہے۔۔ بیٹیاں کون ہیں؟ عورت ۔خلیل الرحمان قمر نے جذباتی انداز میں کہا کہ اور وہ کیا کرے عورت کیلئے ؟ مرجائے؟خلیل الرحمان قمر کی اس بات پر ہال تالیوں سے گونج اٹھا