03:02 pm
یا اللہ رحم فرما ، پاکستان کے اہم شہر میں ڈھائی ہزار سے زائد گھروں کو قرنطینہ کردیا گیا

یا اللہ رحم فرما ، پاکستان کے اہم شہر میں ڈھائی ہزار سے زائد گھروں کو قرنطینہ کردیا گیا

03:02 pm


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )یا اللہ رحم فرما ، پاکستان کے اہم شہر میں ڈھائی ہزار سے زائد گھروں کو قرنطینہ کردیا گیا۔۔۔سیالکوٹ میں ضلعی انتظامیہ کی جانب سے کورونا وائرس سے متاثرہ ممالک سے آئے ہوئے افراد کو خاندانوں سمیت 28 دنوں کے لیے گھروں میں قرنطینہ کردیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق قرنطینہ
ش کیے جانے والے افراد کا تعلق ضلع سیالکوٹ کے مختلف علاقوں سے ہے، اور اب تک انتظامیہ نے ڈھائی ہزار سے زائد گھروں کو قرنطینہ کردیا ہے۔ ڈپٹی کمشنر سیالکوٹ کا کہنا ہے کہ پورے ضلع سے مزید تفصیلات اکٹھی کی جارہی ہیں، ڈیٹا اکٹھا ہونے کے بعد مزید افراد کو خاندانوں سمیت ان کے گھروں میں ہی قرنطینہ کیا جائے گا۔ قرنطینہ کیے گئے افراد کے گھروں کے باہر ضلعی انتطامیہ کی جانب سے نوٹس بھی چسپاں کیے گئے ہیں جس میں ان کے آس پڑوس میں رہنے والوں اور عزیز و اقارب کو ان سے ملاقات کرنے سے منع کیا گیا ہے۔ نوٹس میں واضح کیا گیا ہے کہ قرنطینہ کیے گئے افراد اگر قانون کی خلاف ورزی کریں گے تو ان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔گھروں کے باہر چسپاں کیے گئے نوٹس گھروں کے باہر چسپاں کیے گئے نوٹس رہے کہ ملک میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے اور زیادہ تر کیسز بیرونِ ملک سے آئے ہوئے افراد میں پائے گئے۔ پاکستان میں اب تک مجموعی طور پر ایک ہزار 870 افراد کووِڈ-19 مرض میں مبتلا ہوچکے ہیں جبکہ 24 افراد زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔ اب تک کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کی سب سے زیادہ تعداد پنجاب میں سامنے آئی ہے جو 658 ہے۔ اس کے بعد صوبہ سندھ میں مریضوں کی تعداد 627، خیبر پختونخوا میں 221، بلوچستان میں 152، گلگت بلتستان میں 148، اسلام آباد میں 58 اور آزاد کشمیر میں متاثرہ افراد کی تعداد 6 ہے۔ پاکستان میں اس وقت کورونا وائرس کا خوف ہر طرف پھیلا ہوا ہے۔ ایسے میں حکومت کو ایران سے زائرین لانے کے حوالے سے تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ حکومتی ارکان کی جانب سے بھی تسلیم کیا جا رہا ہے کہ پاکستان میں کورونا وائرس ایران سے آنے والے زائرین کی وجہ سے پھیلا ہے، لیکن اس سب کے بعد بھی زائرین کے آنے کا سلسلہ جاری ہے۔