08:09 am
اساتذہ اورطلبہ کے سکول آنےپرپابندی ، احکامات کی خلاف ورزی پر۔۔۔حکومت کابڑااعلان

اساتذہ اورطلبہ کے سکول آنےپرپابندی ، احکامات کی خلاف ورزی پر۔۔۔حکومت کابڑااعلان

08:09 am

لاہور(ویب ڈیسک)سکولوں کی بندش تک اساتذہ اور طلبا کے سکول آنے پر مکمل پابندی عائد ہوگی، سی ای او ایجوکیشن پرویز اختر خان کا کہنا ہے کہ احکامات کیخلاف ورزی پر متعلقہ سکول سربراہان کیخلاف کاروائی کی جائے گی۔سی ای او ایجوکیشن پرویز اختر خان کا کہنا ہے کہ صرف ہیڈ ٹیچر اور درجہ چہارم کے ملازمین کے علاوہ سکول بندش تک کسی ٹیچر یا طالبعلم کو سکول آنے کی اجازت نہیں ہوگی۔پرویز اخترخان کا کہنا تھا کہ نہم جماعت کے طلبا کو بھی رجسٹریشن کیلئے سکول نہیں بلایا جاسکے گا،
سکول انتظامیہ کے پاس نہم کے طلبا کا ریکارڈ موجود ہے، طلبا کے ریکارڈ کے مطابق اساتذہ رجسٹریشن کرانے کے پابند ہونگے۔انھوں نے بتایا کہ سکول سربراہان پیر، منگل کے روز صبح سوا آٹھ بجے آن لائن حاضری بھجوائیں گے جبکہ درجہ چہارم کے ملازمین پورا ہفتہ ڈیوٹی دیں گے۔واضح رہے کہ8 اگست کو ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی نے سکولوں کے نئے اوقات کار جاری کیے جس کے مطابق سسکول ساڑھے آٹھ بجے لگا کریں گےاور چھٹی سہ پہر دو بجے ہوا کرے گی، سکول ہیڈ صرف پیر اور منگل کے روز سکول آئیں گے،  ایجوکیشن اتھارٹی کے احکامات کے بعد ہیڈ ٹیچرز نے اساتذہ کو سکول آنے کا پابند کر رکھا ہے، لاہور سمیت پنجاب بھر کے سکولز ، کالج، یونیورسٹیاں کورونا کے باعث 23 مارچ سے بند ہیں، حکومت نے 15 ستمبر کو تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ کیا۔دوسری جانب سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ ٹیچنگ اور نان ٹیچنگ سٹاف کی خالی آسامیوں کی تعداد کا تعین کرنےکا فیصلہ کرلیا۔اس حوالے سے تمام ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹیز کو مراسلہ جاری کر دیا گیا،مراسلےمیں سکولوں سےاساتذہ کی ورکنگ اور خالی سیٹوں بارے معلومات طلب کی گئی ہیں۔علاوہ ازیں پہلی سےدہم جماعت کے لیے سمارٹ نصاب تیارکرنے پر کام جاری کردیاگیا،تمام مضامین کا سلیبس برائے امتحانات 2021 پچاس فیصد تک کم ہوجائے گا،سمارٹ سلیبس ستمبرتا فروری میں آسانی سےمکمل ہوسکےگا۔

تازہ ترین خبریں