06:08 pm
سعودی عرب کیساتھ تعلقات خراب ہونے کی خبریں، ترجمان پاک فوج کا اہم بیان

سعودی عرب کیساتھ تعلقات خراب ہونے کی خبریں، ترجمان پاک فوج کا اہم بیان

06:08 pm



اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ترجمان پاک فوج میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا ہے کہ سعودی عرب سے تعلقات بہترین ہیں اور رہیں گے، کسی کو مسلم دنیا میں سعودی عرب کی مرکزیت پر کوئی شبہ نہیں ہونا چاہیے۔ تفصیلات کے مطابق پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے سربراہ میجر جنرل بابر افتخار کی جانب سے جمعرات کے روز کی گئی پریس کانفرنس کے دوران پاک سعودی عرب تعلقات کے حوالے سے اہم
بیان جاری کیا گیا۔ ترجمان پاک فوج نے کہا کہ پاکستان اور پاکستان کی عوام کو ہمارے برادرانہ ملک سعودی عرب کے ساتھ تعلقات پر فخر ہے اور یہ تعلقات بہترین ہیں اور بہترین رہیں گے۔ سعودی عرب کے ساتھ ہمارے تعلقات تاریخی اور بہت اہم ہیں ، اس میں کسی قسم کا کوئی شک نہیں ہونا چاہیے۔ پاکستانی عوام کے دل سعودی عوام کے ساتھ دھڑکتے ہیں اور ان تعلقات پر کوئی سوال اٹھانے کی ضرورت نہیں ہے۔ ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ آرمی چیف کا دورہ سعودی عرب پہلے سے شیڈول تھا۔ ہمارے ملٹری ٹو ملٹری تعلقات چلتے رہتے ہیں اس کے ساتھ منسلک ہے۔ ترجمان پاک فوج نے مزید کہا کہ پاکستان نے تین مرتبہ اقوام متحدہ میں کشمیر کا مسئلہ اٹھایا ، جو اس بات کی دلیل ہے کہ پاکستان کا مسئلہ حقیقت ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں ایک سال سے کرفیو نافذ ہے۔دنیا کا ہر ظلم کشمیریو ں پر آزمایا جا رہا ہے۔ کشمیریوں کو سلام ہے جو آزادی کی جدوجہد کررہے ہیں۔ عالمی میڈیا نے بھارتی مظالم بے نقاب کئے۔ مقبوضہ کشمیر میں ہندوستان کی طرف سے مبصرگروپ کو لائن آف کنٹرول پر جانے کی کوئی آزادی نہیں، لیکن ہم نے عالمی مبصرین کو آزادکشمیر میں ہرجگہ جانے کی اجازت دی۔ ایل اوسی پر شہریوں کی حفاظت کیلئے شیلٹرز بنانے کا فیصلہ کیا ہے، ایک ہزار شیلٹرز تعمیر ہوچکے ہیں، باقی بنائے جا رہے ہیں۔ ہندوستان کو اندرونی معاملات نے ایسے موڑ پر لے آیا ہے کہ لاوا کسی وقت بھی پھٹ سکتا ہے۔ بھارت خطے کو عدم استحکام کی طرف دھکیل رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت پاکستان میں دہشتگردی کی کاروائیوں میں ملوث ہے۔ کراچی سٹاک ایکسچینج پر ناکام حملہ یا دہشتگردو کی معانت کیلئے منی لانڈرنگ کے تانے بانے ہندوستان سے ملتے ہیں۔ بھارت کی اسلحہ خریداری اس کی جارحانہ عزائم کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ پاکستان ہندوستان کے مذموم اداروں سے مکمل آگا ہ ہے، جنگیں صرف اسلحے کے زور پر نہیں جیتی جاتیں۔ انہوں نے ایک سوال پر کہا کہ پاکستان کیخلاف 3محاذ کھولنے کا بھارت کا خواب پورا نہیں ہوگا، بھارت نے فرانس سے 5 رافیل طیارے خریدے ہیں، بھارت 500رافیل طیارے بھی خرید لے، ہم تیار ہیں، ہم محدود وسائل میں بھارت کا مقابلہ کریں گے۔بھارت رافیل لے آئے یا ایس 400 ہم دفاع کرنے کیلئے تیار ہیں۔

تازہ ترین خبریں