02:49 pm
ایشز سیریز میں سمتھ ایک دیوار کی طرح انگلینڈ کے راستے میں حائل

ایشز سیریز میں سمتھ ایک دیوار کی طرح انگلینڈ کے راستے میں حائل

02:49 pm

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)انگلینڈ نے پہلی اننگز کھیل لی ہے اور ایک مشکل وکٹ پر 258رنز بنالیے ہیں۔ آسٹریلوی ٹیم بیٹنگ کےلئے میدان میں اتری ہے۔ ٹاپ آرڈر پھر ناکام ہوتا دکھائی دیتا ہے۔ اوپنر جلدی آئوٹ ہوچکے ہیں۔ تیسرے نمبر پرآنے والے عثما ن خواجہ بھی لپیٹ لیے گئے ہیں۔ سمتھ بیٹنگ کےلئے آتے ہیں۔ خود سیٹ ہونے سے پہلے ہی ٹراوس ہیڈ اور میتھیو ویڈ کو آئوٹ ہوتا ہوا دیکھ لیتے ہیں۔ 102پر پانچ وکٹیں گر گئی ہیں۔ سمتھ کپتان ٹم پین کے ساتھ مل کر پہلے 66رنز اور پھر بائولر کمنز کے ساتھ مل کر 56رنز کی سانجھے داری بنا ڈالتے ہیں۔
خود سامنا کرتے ہیں۔ ڈٹ کر مقابلہ کرتے ہیں۔ زیادہ برتری حاصل کرنے کے انگلینڈ کے ارمان خاک میں مل جاتے ہیں،سمتھ آخر تک کھیلتے ہیں اور 14 چوکوں کی مدد سے 92رنز بنا کر آئوٹ ہو جاتےہیں آسٹریلیا انگلینڈ کو صرف 8رنز کی برتری لینے کا موقع دیتا ہے اور انگلینڈ کا ٹاپ آرڈر دوسری اننگز میں لڑکھڑا جاتا ہے اور میچ میں آسٹریلیا کا پلڑا بھاری ہوگیا ہے۔ یہ وہی سمتھ ہیں جنھوںنے پہلے ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں 144رنز کی اننگز کھیل کر اپنی ٹیم کو مشکلات سے نکالا جبکہ دوسری اننگز میں 146رنز کی باری کھیل کر آسٹریلیا کو ایک بڑا ٹارگٹ مقررکرنے میں مدد فراہم کی اور میچ کی جیت میں نمایاں کردار ادا کیا ۔ اس طرح یہ کہنا بے جا نہ ہوگا کہ انگلینڈ کی پوری ٹیم کا مقابلہ اس وقت ایک اکیلے سمتھ سے ہے اور وہ اکیلے ہی انگلش ٹیم کو ناکوں چنے چبوا رہے ہیں۔سمتھ ٹیسٹ کرکٹ میں سر ڈان بریڈ مین کے بعد تیز ترین 25سنچریاں بنانے والے دنیا کے دوسرے بلے باز بن چکے ہیں۔ایک سال کی پابندی بھی سمتھ سےدنیائے کرکٹ کا عظیم بلے باز ہونے کی پہچان نہیں چھین سکی۔