03:06 pm
یہ سب ٹوپی ڈرامہ ، کچھ نہیں ہونا۔۔ آزادی مارچ کو مسترد کرتے  ہوئے شاہد آفریدی نےدھماکہ خیز بیان دے دیا

یہ سب ٹوپی ڈرامہ ، کچھ نہیں ہونا۔۔ آزادی مارچ کو مسترد کرتے ہوئے شاہد آفریدی نےدھماکہ خیز بیان دے دیا

03:06 pm

کراچی (ویب ڈیسک)قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہدخان آفریدی نے مولاناکے آزادی مارچ پرتبصرہ کرتے ہوئے کہاکہ کسی بھی پاکستانی کافرض پاکستان کے لیے سوچناہے ۔یہی دھرنادینے والے ایک وقت ساتھ تھے کیاوہ متحد رہیں گے۔تفصیلات کے مطابق قومی ٹیم کے سابق کپتان شاہدآفریدی نےد ھرناسیاست کومستردکردیاانہوں نے کہاکہ کچھ عرصہ قبل یہ لوگ ایک دوسرےکے مخالف تھے اب نئی حکومت کے لیے متحدہوگئے ہیں اگرایساہے تووہ حکومت کے معاملے میں متحد کیوں نہیں رہ سکتے یہ خودکوتباہ کرنےکابہترین تحفہ ہے۔سابق کپتان قو می ٹیم ایک تقریب کے دوران کہا کہ جو ملک کے لیے بہتر ہو وہی ہونا چاہیے کیونکہ یہ ہم سب کا ملک ہے، ہم سب خوشحال زندگی گزارنا چاہتے ہیں، چاہتے ہیں کہ سکول و کالجز کھلے رہے ہیں اور دھرنے نہ ہوں۔
حکومت کی حمایت کرتے ہوئے بولے وزیر اعظم عمران خان کو ہمیں 2 سال کا وقت دینا چاہیے کیونکہ یہ 70،72سال کا ملک ہے جس کے بہت سارے مسائل ہیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان کو 2سال دیں جس کے بعد نتائج آ جانے چاہئیں کیوں کہ دو سال چیزوں کو بہتر کرنے کے لیے بہت ہوتے ہیں۔

تازہ ترین خبریں