11:49 am
’’بیچارہ نظام‘‘

’’بیچارہ نظام‘‘

11:49 am

میرا نام نظام ہے اور میں بہت دیرسے دہائی دے رہا ہو ںکہ مجھے ان نقاب پوش ڈاکوئوں سے بچایا جائے
میرا نام نظام ہے اور میں بہت دیرسے دہائی دے رہا ہو ںکہ مجھے ان نقاب پوش ڈاکوئوں سے بچایا جائے جو میری شکل کا نقاب پہن کر میرا نام لے کر بار بار ملک لوٹنے آ جاتے ہیں اور عوام کو میرا نام لے کر ڈراتے ہیں کہ اگر ان کے ڈاکے، چوریاں، قبضے، فراڈ، جعلی اکائونٹ، جعلی دوائیاں، جعلی اشیاء اور قبضے کی زمین، بے تحاشہ غیر ملکی قرضے جو صرف اِن کا اکائونٹ میں جاتے ہیں، جعلی وعدے بے نقاب کئے گئے اور اس پر ان کی پکڑ دھکڑ ہوئی تو نظام فوت ہو جائے گا، میں اپنے ملک کے شہریوں کے سامنے اِن تمام بدعنوان عناصر سے لاتعلقی کا اعلان کرتا ہوں کہ میری تخلیق کے وقت تو یہ وعدہ لیا گیا تھا کہ میری پناہ میں آنے والے ملک پاکستان میں اسلامی قوانین رائج کریں گے، عوام کے حقوق کی حفاظت کریں گے، ملک کی بہترین فلاح کے لئے کام کریں گے۔
 ملک میں ہرشہری کو ملازمت کے برابر کے حقوق حاصل ہوں گے، ان کی صحت کے لئے بہترین ہسپتال قائم کئے جائیں گے، روٹی، کپڑا مکان کے یکساں مواقع ملیں گے، امن و امان کی مثالی صورت پیدا کی جائے گی، ہر شہری کو اپنی مرضی کا کاروبار کرنے کی مکمل آزادی ہو گی، تحریر و تقریر پر کوئی پابندی نہیں لگائی جائے گی۔ اب اگر جائزہ لیں تو اندازہ ہوتا ہے کہ نہ توملکی قوانین پراسلامی قانون کو فوقیت حاصل ہے، نہ ہی عوام کے حقوق کی حفاظت کی ضمانت دی جا رہی ہے، ملک کی فلاح کی بجائے اپنی اور اپنے خاندان کی دُنیاوی ولاح کیلئے لوٹ کھسوٹ کے ریکارڈ توڑے جا رہے ہیں، ہر شہری کو ملازمت کے مساوی اور قابلیت کی بنیاد پر نوکری کی ضمانت کے بجائے مختلف عوامی نمائندوں کو کوٹہ دے دیا جاتا ہے اور وہ اپنی من پسند افراد یا سکہ رائج الوقت کی صورت میں بہترین معاوضہ دے کر وہ ملازمتیں دی جاتی ہیں۔
جہاں تک صحت کے لئے ہسپتال قائم کرنے کا تعلق ہے تو تیس تیس سال تک حکومت کرنے والے اپنے علاج کے لئے دیار غیر کا رُخ کرتے ہیں حالانکہ انہیں تو مرنے کے لئے وسیع میدان میں چیلوں کوئوں کے لئے چھوڑ دینا چاہئے، روٹی کپڑا مکان تو اب صرف ان لوگوں کا حق رہ گیا ہے جو میرا نام لے لے کر شہریوں کو خوفزدہ کرتے ہیں کہ اگر ہماری بدعنوانیو ںکی طرف احتساب نے رُخ کیا تو بیچارہ نظام مَر جائے گا، امن و امان کی صورتِ حال یہ ہے کہ سندھ میں سینکڑوں وارداتیں روزانہ ہو رہی ہیں بلوچستان میں معصوم و بے گناہ لوگ مختلف فرقوں سے تعلق رکھنے کی وجہ سے بے گناہ مارے جا رہے ہیں۔
پنجاب میں پولیس مقابلے زوروں پر ہیں اور قبضہ مافیا کسی بھی پراپرٹی وہ سرکاری ہو یا پرائیویٹ اپنے باپ کی جاگیر سمجھ کر اس پر تعمیر شروع کر دیتے ہیں، تحریر و تقریر کی کھلی خرید و فروخت جاری ہے اور دوسرے شعبوں کی طرح اِن بے لگام ضمیر فروشوں کو بھی پوچھنے والا کوئی نہیں سب سے پہلے یہی میری موت کی خبر لگاتے ہیں کہ نظام مَر رہا ہے جبکہ میں تو پھٹی پھٹی آنکھوں سے اِن کی پھٹی ہوئی چپل سے ایکڑوں پر پھیلے فارم ہائوس چمکیلی گاڑیاں اور درآمد شدہ کپڑوں سے سجے ہوئے جہنم کے لئے تیار ہوتاہوا ایندھن دیکھ رہا ہوتا ہوں نظام انہوں نے دراصل اپنی خواہشات اپنے بڑھتے ہوئے لالچ، بھرے ہوئے بینک اکائونٹ، دنیا بھر لوٹ کھسوٹ سے خریدی گئی جائیدادوں کا نام رکھ دیا ہے چونکہ یہ چوری کے عادی ہیں اِس لئے میرا نام چرا کر اس کا ملمع اپنی خواہشات پر چڑھا دیا ہے۔
 اب تو مجھے ان سے سوال کرنا ہے کہ نظام تم لوگوں نے کِس چیز کا نام رکھا ہے جبکہ میرا نام تو انتہائی پاکیزہ اور ملک کو صحیح راستے پر چلانے والا ہے، میرا نام تو لوگوں بہترین خواہشات کا نام ہے میرا نام تو عوام کی خوشحالی، سکون، امن، تعلیم، صحت سچائی اور بہترین سیاست جو کہ ہر قسم کی گندگی سے پاک ہو، مجھے تولوگوں نے صدیوں کی تحقیق کے بعد تلاش کیا تھا اور میں نے کبھی یہ تصور بھی نہیں کیا تھا کہ ملک لوٹنے والے، سازشوں کے انبار اپنے غلیظ ذہن میں چھپائے اور اپنے بچو ںکے لئے دوزخ کی کمائی کمانے والے میرے نام کو اِس طرح بدنام کریں گے کہ اگر ہمیں کرپشن سے روکا گیا، اگر لوٹی ہوئی کمائی ہم سے واپس مانگی گئی، اگر ملک دشمنی کی سازشوں پر ہم سے پوچھ گچھ کی گئی تو نظام خطرے میں پڑ جائے گا ۔
میں نے تو سوچا بھی نہیں تھا کہ مذہب کے نام پر بھی میری ہی زندگی کے بارے میں طرح طرح کے فقرے کہے جائیں گے، میں آج سرعام اِن تمام لوگوں سے لاتعلقی کا اعلان کر رہا ہوں اور عوام سے درخواست کر رہا ہوں کہ چور کوئی بھی ہو، کیسے ہی مرتبے پر فائز کیوں نہ رہا ہو، کتنے ہی بیچارے معصوم عوام اس کی چکنی چپڑی باتوں کے جال میں پھنس کر اسے ووٹ دے رہے ہوں اسے ہر گز ہر گز میری زندگی کا واسطہ بھی دے تو بھی اسے معاف نہ کریں اسے آنے والے وقتوں کے لئے عبرت کا نشان بنا دیں تا کہ میرا یعنی نظام کا واسطہ اپنی جھوٹ بولنے والی زبان سے نہ دے سکیں۔

 

تازہ ترین خبریں

موجودہ انتخابی نتائج مسلم لیگ (ن)کے لئے ڈرائونا خواب ثابت ہوئے

موجودہ انتخابی نتائج مسلم لیگ (ن)کے لئے ڈرائونا خواب ثابت ہوئے

پولیس اہلکار عزیربلوچ کے خلاف گواہی دینےسے کترانے لگے

پولیس اہلکار عزیربلوچ کے خلاف گواہی دینےسے کترانے لگے

حکومت نے پٹرول کی فی لٹر قیمت میں اضافہ کردیا

حکومت نے پٹرول کی فی لٹر قیمت میں اضافہ کردیا

خون سفید ہو گیا ، پاکستان کےا ہم شہر میں بڑے بھائی نے چھوٹے بھائی اور بھابھی کو ق ت ل کردیا اور پھر ۔۔۔!

خون سفید ہو گیا ، پاکستان کےا ہم شہر میں بڑے بھائی نے چھوٹے بھائی اور بھابھی کو ق ت ل کردیا اور پھر ۔۔۔!

ورلڈ بینک کا صوبہ سندھ میں شرح خواندگی بہتر بنانے کےلئے دس کروڑڈالر کا اعلان

ورلڈ بینک کا صوبہ سندھ میں شرح خواندگی بہتر بنانے کےلئے دس کروڑڈالر کا اعلان

الٰہی خیر۔۔! چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کو ہنگامی طور پر ہسپتال منتقل کر دیا گیا

الٰہی خیر۔۔! چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کو ہنگامی طور پر ہسپتال منتقل کر دیا گیا

سندھ بھر میں آئندہ ہفتے ہونے والے امتحانات ملتوی کرنےکا فیصلہ

سندھ بھر میں آئندہ ہفتے ہونے والے امتحانات ملتوی کرنےکا فیصلہ

شہبازشریف کی پارٹی صدارت چھوڑنے کی دھمکی

شہبازشریف کی پارٹی صدارت چھوڑنے کی دھمکی

بجلی کی قیمتوں میں 7 پیسے فی یونٹ کمی کی منظوری

بجلی کی قیمتوں میں 7 پیسے فی یونٹ کمی کی منظوری

نور مقدم کیس کے دوران عثمان مرزا کو تو سب بھول ہی گئے ، کیس میں بڑی پیش رفت ، اہم انکشافات

نور مقدم کیس کے دوران عثمان مرزا کو تو سب بھول ہی گئے ، کیس میں بڑی پیش رفت ، اہم انکشافات

سیکرٹری قانون استعفیٰ کب اور کیوںدیں گے؟ خود ہی بتا دیا

سیکرٹری قانون استعفیٰ کب اور کیوںدیں گے؟ خود ہی بتا دیا

خبردار! اے ٹی ایم استعمال کرتے ہوئے چوکنا رہیں

خبردار! اے ٹی ایم استعمال کرتے ہوئے چوکنا رہیں

ملکی بڑی شخصیات کی جانب سے کروڑوں کے پلاٹ 100روپے کنال میں خریدے جانے کا انکشاف

ملکی بڑی شخصیات کی جانب سے کروڑوں کے پلاٹ 100روپے کنال میں خریدے جانے کا انکشاف

 ،اسلام آبادسیکٹر E/11میں 1سو روپے فی کنال کے حساب سے لوٹ سیل لگ گئی ،پاکستانی حیران ، پریشان

 ،اسلام آبادسیکٹر E/11میں 1سو روپے فی کنال کے حساب سے لوٹ سیل لگ گئی ،پاکستانی حیران ، پریشان