01:51 pm
مسلما ن سرزمین پر متوقع تین جنگیں

مسلما ن سرزمین پر متوقع تین جنگیں

01:51 pm

چند دن پہلے افواج پاکستان کے ترجمان اور وزیر خارجہ نے مشترکہ پریس کانفرنس میں نومبر، دسمبر میں پاکستا ن پر بھارتی حملے کی منصوبہ بندی کا انکشاف کیا ہے۔ سرحد پر پاک بھارت کے مابین شدید ترین گولہ باری ہوچکی ہے۔ یہ مشترکہ پریس کانفرنس اسی حوالے سے بھارتی منصوبوں کو بے نقاب کرنے کے لئے تھی کہ بھارت پاکستان کو اندر سے غیر مستحکم کرنے کے جو منصوبے ، کوششیں، بدامنی، تخریب کاری، لسانی، علیحدگی پسندی کے متشدد رجحان کا جو سرپرست اعلیٰ بنا ہوا ہے اور افغانستان میں پاکستانی سرحد کے ارد گرد بھارتی سفارت خانے کے علاقائی دفاتر جو تباہی و بربادی پاکستان میں بھیجنے کی تاریخ، رویہ، کردار  رکھتے ہیں اس  کو دنیا کے سامنے پیش کیا گیا تھا۔ یہ عمدہ کوشش تھی۔
افواج پاکستان کے ترجمان اور وزیرخارجہ کی مشترکہ پریس کانفرنس میںنومبر، دسمبر میں بھارتی حملے اور جنگ کا اندیشہ ظاہر کیا گیا ہے ۔ میں ، فقیر و قلندر، مدت سے جنگوں کے حوالے سے کالم لکھ رہا ہوں۔ نجوم اور روحانی وجدان رکھتی شخصیات سے بھی رابطے میں رہتا ہوں۔ وہ جو کچھ مجھے بتاتے ہیں اسے اپنے انداز میں ذرا نرم کرکے لکھ دیتاہوں تاکہ حکمت عملی تیار کرنے والے ہمہ جہت تیاری کرکے دفاع پاکستا ن کو مضبوط بنائیں۔ اس مشترکہ کانفرنس سے ذرا سا پہلے میں نے لاہور میں مقیم روحانی وجدان رکھتی شخصیت سے پوچھا کہ پاک بھارت جنگ کتنی دور ہے؟ اور یہ کہ جنگیں کس قدر توسیع پاتی نظر آتی ہیں؟ ان کا جواب تھا کہ ایک جنگ تو وہ ہے جو پاک بھارت کا نام پاتی ہے۔ یہ اپنی تاریخی دشمنی اور مخالفت کے باعث ہمیشہ سرد جنگ کے طور پر موجود رہتی ہے۔ البتہ جب سے مودی وزیراعظم بنے ہیں تب سے سرحدوں پر ہندوتوا  دبائو کی حقیقت بار بار ظہور پذیر ہوتی رہی ہے۔ امکان ہے کہ یہ جنگ دسمبر، جنوری، فروری میں سچ مچ ہو جائے، اگر ہی جنگ شروع ہوگئی تو ماہر نجوم بزرگ کے مطابق انڈیا1971 ء کی طرح بھرپور کوشش کرے گا کہ وہ پاکستان کو جغرافیائی انداز میں بھی شدید ترین نقصان پہچائے۔ دعا ہے کہ خدا برصغیر کو اس ہولناک جنگ سے محفوظ رکھے۔ آمین۔ ماہر نجوم کے مطابق یہ جنگ اگر دسمبر، جنوری، فروری میں وقوع پذیر ہو جاتی ہے۔ جیت ہار، فتح و شکست ، کون فاتح ہوگا اور کون مفتوح ہوگا؟ اس پہلو کو فی الحال نظر انداز کر دیں کیونکہ یہ جنگ جو انڈیا پاکستان پر مسلط کرکے بزعم خویش فاتح بنے کی کوشش کرے گا، اس کی خواہش اپنی جگہ، مگر قدرت الٰہی اس جنگ کے نتائج کے طور پر سینٹرل ایشیاء، ترکی، افغانستان وغیرہ کے مسلمانوں کو برصغیر کے بے بس مسلمانوں کے ساتھ اسی طرح لاکھڑا کرے گی جیسے احمد شاہ ابدالی، محمود غزنوی کے عہد میں ہوتا رہا تھا پھر ہندوا کے ساتھ اصل مہلک ترین جو جنگ مسلمان کریں گے وہ اس جنگ کے بعد ممکن ہوگی جو پاک بھارت میں انفرادی طور پر ممکن ہو رہی ہے۔ جب کبھی امر ربی سے سینٹرل ایشیاء ترکی،  افغانستان کے مسلمان برصغیر کے مسلمانوں پر ہونے والے مظالم، پاکستان پر ہونے والے ہندوازم کے مہلک وار، دیکھ دیکھ کر تھک جائیں گے تو وہ امر ربی کے ساتھ اٹھ کھڑے ہوں گے اور یہ عظیم ترین جنگ ہوگی جس میں ہندوتوا ہمیشہ ہمیشہ کے لئے جھک جائے گا۔ اسلام ا ور مسلمان برتر قوت بن جائیں گے۔ روحانی وجدان کے مطابق انڈیا راجھستان  سے منصوبہ بندی کرکے اندرون سندھ سے لے کر کراچی ،گوادر تک کے سمندری کنارے رکھتے جغرافیئے کو پاکستان سے چھین لینے کی کوشش کرسکتا ہے۔
روحانی وجدان  کے بزرگ کا خیال ہے کہ دوسری جنگ ممکن ہے مشرق وسطیٰ میں ہو جائے۔ جیسا کہ اسرائیلی وزیر کا بیان سامنے آیا تھا کہ  اگر جوبائیڈن انتخاب جیت گیا تو اسرائیل کو ایران پر حملہ کرنا پڑے گا۔ ایسی صورت میں یہ جنگ صرف ایران پر حملے تک مسلط نہ رہے گی بلکہ پورے مشرق وسطیٰ میں پھیل جائے گی  ۔ تیسری جنگ بحرروم میں ترکی کی نمودار ہوتی متوقع سپر پاور حیثیت کو روکنے کے لئے ہوگی۔ یونان اور اس کے حمایتی ترک کو کچل دینے کی کوشش کریں گے۔ دلچسپ بات ہے کہ یونانی قبرص کے حمایتیوں میں کچھ عرب بادشاہتوں کا نام بھی آتا ہے، ہے ناں دلخراش بات؟ روحانی وجدان کے مطابق یہ تینوں جنگیں مسلمان سرزمینوں پر ہوسکتی ہیں ۔ منصوبہ  بندی یہ ہوگی کہ عرب بادشاہتیں پاکستان کی اخلاقی، سیاسی طور پر بھی مدد کے قابل نہ رہیں۔ اس طرح دلیرانہ طور پر مسلمان ترکی چونکہ برصغیر کے مسلمانوں کی حمایت میں زوردار آواز اٹھاتا رہا ہے، اسے برصغیر کے مسلمانوں کی مدد سے روکنے کے لئے بھی اس پر جنگ مسلط ہوسکتی ہے تاکہ وہ بھی پاکستان کی مدد نہ کرسکے۔ 
روحانی شخصیت نے متوجہ کیا کہ منتخب نائب صدر امریکہ کملاہیرس، وزیراعظم عمران خان، سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کو اپنی زندگی کی حفاظت کے لئے زیادہ بہتر انتظامات کرنا چاہیں۔ ان کاکہنا ہے کہ  کملا ہیرس اپنی مدت نائب صدارت میں بہت سے خطرات میں دوچار نظر آتی ہیں جبکہ سعودی ولی عہد بھی۔ ان کے بقول عربوں کے حوالے سے مستقبل کافی دگرگوں، غیر متوقع بھی نظر آتا ہے۔ واللہ اعلم بالصواب


 

تازہ ترین خبریں

 بجلی کی قیمت میں اضافے کی تیاریاں شروع

بجلی کی قیمت میں اضافے کی تیاریاں شروع

برطانیہ نے الطاف حسین جیسے آدمی کو پاکستان کے حوالے نہیں کیا

برطانیہ نے الطاف حسین جیسے آدمی کو پاکستان کے حوالے نہیں کیا

وزیرصحت سندھ نے تعلیمی ادارے کھولنےکی مخالفت کردی

وزیرصحت سندھ نے تعلیمی ادارے کھولنےکی مخالفت کردی

پاکستان پہلےسےکہہ رہاتھاپلوامہ حملہ ڈرامہ ہےبھارت نےگزشتہ 20سال سےدہشتگردی کاڈھونگ رچایاتھا،۔ معید یوسف 

پاکستان پہلےسےکہہ رہاتھاپلوامہ حملہ ڈرامہ ہےبھارت نےگزشتہ 20سال سےدہشتگردی کاڈھونگ رچایاتھا،۔ معید یوسف 

 تحریک انصاف نے سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کے نام کا فیصلہ کر لیا

تحریک انصاف نے سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر کے نام کا فیصلہ کر لیا

افغانستان میں موجود امریکی فوج 20سالوں کی کم ترین سطح پر آگئی

افغانستان میں موجود امریکی فوج 20سالوں کی کم ترین سطح پر آگئی

تحریک انصاف اور ایم کیو ایم میں معاملات طے پا گئے

تحریک انصاف اور ایم کیو ایم میں معاملات طے پا گئے

سندھ میں چار ہزار افسران اور ملازمین کے خلاف کارروئی شروع

سندھ میں چار ہزار افسران اور ملازمین کے خلاف کارروئی شروع

حکومت نے نعیم بخاری کو چئیرمین پی ٹی وی کےعہدے سے ہٹا دیا

حکومت نے نعیم بخاری کو چئیرمین پی ٹی وی کےعہدے سے ہٹا دیا

کوئٹہ میں دھماکہ، دو افراد نشانہ بن گئے

کوئٹہ میں دھماکہ، دو افراد نشانہ بن گئے

فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ اس لیے نہیں ہو پا رہا کیونکہ کٹہرے میں کھڑے شخص کا نام نواز شریف نہیں ہے بلکہ عمران خان ہے۔ نواز شریف 

فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ اس لیے نہیں ہو پا رہا کیونکہ کٹہرے میں کھڑے شخص کا نام نواز شریف نہیں ہے بلکہ عمران خان ہے۔ نواز شریف 

   انقلابی شاعر کا نالائق بیٹا شبلی فراز شاہی گداگر بن چکا ہے،  شازیہ مری  

   انقلابی شاعر کا نالائق بیٹا شبلی فراز شاہی گداگر بن چکا ہے،  شازیہ مری  

دیر سے آنے پر گاہک کا ڈلیوری بوائے سےکھانا لینے پر انکار

دیر سے آنے پر گاہک کا ڈلیوری بوائے سےکھانا لینے پر انکار

ملائیشیا میں پی آئی اے طیارےکی قبضےکامعاملہ ۔۔ لیز پر لیے گئے طیارے کی کمپنی کا مالک اور ڈائریکٹر بھارتی نکلے

ملائیشیا میں پی آئی اے طیارےکی قبضےکامعاملہ ۔۔ لیز پر لیے گئے طیارے کی کمپنی کا مالک اور ڈائریکٹر بھارتی نکلے