01:58 pm
دنیا  اور آخرت کی تباہی سے بچیں

دنیا  اور آخرت کی تباہی سے بچیں

01:58 pm

(گزشتہ سے پیوستہ)
دنیا کی محبت،  جب آدمی کسی چیز کا گرویدہ ہو جاتا ہے تو اندھا دھن اسی کے پیچھے لگا رہتا ہے۔ عربی میں ضرب المثل مشہورہے  ’’ کسی چیز کی محبت تجھے  اندھا اور بہرا کر دیتی ہے،  جب  کسی پر دنیا غالب ہو جاتی ہے تو وہ بغیر کسی انجام کی پرواہ کئے اس کے پیچھے لگا رہتا ہے، اللہ ہماری حفاظت فرمائے ۔ آمین۔
 خواہشات کی پیروی، انسان کو اللہ  نے دو چیزیں بغرض آزمائش عطا کی ہیں، ایک عقل اور دوسری نفس ،  پھر ان دونوں کے تعاون کے دو خارجی اسباب پیدا کئے ہیں وحی اور شیطان، وحی عقل کی رہنمائی کرتی ہے اور شیطان شہوانیت کو ہوا دیتا ہے ، اب اگر انسان شہوانیت اور شیطان کے جال میں پھنس جاتا ہے تو گناہ پر گناہ کئے جاتا ہے ،  اللہ نفس اور شیطان سے ہمیں محفوظ رکھے۔  آمین
 بعض لوگ گناہ پر گناہ کرتے ہیں اور پھر جب نصیحت اور موعظت کی جائے تو کہتے ہیں، کیا کرین، مقدر میں جیسا لکھا ہے ویسا  ہوتا ہے، یہ صحیح نہیں، اس لئے کہ اسباب اختیاری ہیں، جب انسان برے اسباب اختیار کرتا ہے تو برائی پر آمادہ ہوتا ہے … اگر بندہ برائی سے بچنے کی کوشش کرے تو اللہ ضرور اسے بچا لیتے ہیں، ہم کوشش نہیں کرتے او رپھر تقدیر کا رونا روتے ہیں، یہ عقیدہ تقدیر کو اچھی طرح نہ سمجھنے کی وجہ سے ہوتا ہے ،   اللہ ہمیں صحیح سمجھ عطا فرمائے ۔ آمین۔
 اللہ کی مغفرت کی امید بھی گناہ پر آمادہ کرتی ہے مثلاً گناہ  کرتے وقت انسان سوچتا ہے ، ارے ، اللہ تو غفور الرحیم ہے، ضرور معاف کر دے گا، مگر یہ یاد رکھنا چاہیے کہ اللہ عزیز ذوانتقام  بھی ہے، اور شدید العقاب بھی ،یعنی سخت پکڑ کنے والا ور سخت سزا دینے والا ہے، لہٰذا مغفرت  کی بیجا امید ، پر گناہ پر گناہ کرنا غلط ہے ،  کیوں کہ اگر گناہ پر گناہ کرتا رہا اور اسی حالت میں موت آگئی تو ایمان کے ضائع  ہونے کاخدشہ ہے ، اللہ ایمان کے ساتھ موت عطا فرمائے ۔آمین
غصہ سے بے قابو ہو جانا بھی گناہ اور ظلم پر آمادہ کرتا ہے ، غصہ میں کبھی کسی کو قتل کردیتا ہے ،  کبھی کسی کے ہاتھ پائوں موڑ دیتا ہے وغیرہ، لہٰذا غصہ آئے تو اس صورت میں صبر سے کام لے۔
 خواہشات کی پیروی بھی گناہ کے رئیسی اسباب میں سے ہے، شہوانیت کی وجہ سے کبھی بوس و کنار  اور کبھی زنا اور ناچ گانے پر اتر آنا ،  لہٰذا ایسی حالت میں استغفار اور تعوذ کا ورد شروع کر دینا چاہیے، اکہ شہوانی قوت پست ہو جائے یا ٹھنڈی ہو جائے۔
 کبھی آدمی سے بہت زیادہ گناہ ہو جاتے ہیں تو وہ اللہ کی رحمت سے ناامید ہو جاتا ہے اور پھر گناہ پر جری ہو جاتا ہے… حالانکہ مومن کو اللہ کی رحمت سے نامید ہونے کی ضرورت نہیں، کتنا بڑا گناہ ہو ، خواہ کتنی ہی مرتبہ کیوں نہ ہو، یاد آنے پر فوراً استغفار اور توبہ کرے۔
 مولانا پیر ذوالفقار نقش بندی فرماتے ہیں،  آدمی چار وجوہات کی بنا پر گناہ کرتا ہے۔ وہ یہ سمجھتا ہے کہ گناہ کرتے وقت اسے کوئی نہیں دیکھتا ،حالانکہ قرآن میں ارشاد خداوندی  ہے ۔ تیرا  پروردگار تیری گھات میں ہے… یعنی ایک لمحہ ایک سکینڈ کے لئے بھی تجھ سے غافل نہیں۔
 گناہ کرتے وقت یہ سمجھتا ہے کہ میر ے پاس کوئی نہیں ،حالانکہ  قرآن میں ارشاد باری ہے ، تم جہاں کہیں رہو اللہ تمہارے ساتھ ہے۔
 کبھی انسان گناہ اس لئے کرتا ہے کہ وہ جانتا ہے کہ میری ان حرکتوں کا کسی کو علم نہیں، قرآن نے کہا ،   وہ تمہاری نظر کی خیانت کو بھی جانتا ہے اور تم دل میں جو کچھ  چھپاتے ہو ا سے بھی جانتاہے۔(سورہ مومن 19 )
بے شمار آیات قرآنی اس پر دلیل ہیں کہ گناہ کی سزا  دنیا میں بھی ہوئی ،  صرف یہی نہیں بلکہ شیطان اور امم سابقہ جو گناہوں  کے ارتکاب کی وجہ سے مختلف طریقوں سے ہلاک کی گئیں ، کیوں کہ اس گناہ کی وجہ سے  ابلیس لعین کوراندہ درگاہ کیا گیا، گناہ کی وجہ سے ملعون ہوا، باطن تباہ وبرباد ہو گیا، بجائے رحمت کے لعنت کا مستحق ہوا، قرب کے بدلے بعد حصہ میں آیا… تسبیح اور تقدیس کیجگہ کفر، شرک جھوٹ اور فحش انعام میں ملا ،  یہ گناہ ہی تھے جنہوں نے قوم نوح علیہ السلام کو طوفان میں غرق کر دیا ، اسی گناہ کی وجہ سے قوم عاد تندو تیز ہوا سے ہلاک کر دی گئی۔  یہی وہ گنا ہے کہ قوم ثمود کو چیخ کی آواز سے ہلاک کردیا گیا ،  وہ کونسی چیز تھی جس کی وجہ سے قوم لوط کی بستیوں کو آسماں تک لے جا کر الٹ دیاگیا ، قوم شعیب ، قوم فرعون  وقارون وغیرہ اقوام کی بربادی اور ہلاکت کا سبب محض گناہ کے اور کیا تھا؟
 معلوم ہوا گناہ کی سزا انسان  کو دنیا میں بھگتنا پڑتی ہے اور آخرت میں بھی ہو گی، بلکہ قبر میں بھی مبتلائے عذاب ہونا ہو گا… عام طورپر جو لوگ یہ سمجھتے ہیں کہ گناہ اور برائی کی سزا دنیا میں نہیں ہوتی ، آخرت میں ہوتی ہے، غلط  ہے، صحیح یہ ہے کہ دنیا میں بھی اس کی سزا ہوتی ہے، آج ہمارے معاشرے میں بے حیائی عام ہے تو کیا طرح طرح کی نئی نئی  بیماریاں عام نہیں ہورہی ہیں؟ آج ہمارے معاشرے میں ناپ تول میں کمی ہورہی ہے تو کیا ظالم حکمران ہم پر مسلط نہیں؟ آج ہمارے معاشرے میں زکٰوۃ دینے کا اہتمام نہیں تو کیا بارش کی قلت نہیں ہے؟  آج ہم لوگ وعدے پر وعدے کی مخالفت کرتے ہیں توکیا اغیار کو ہم پر مسلط نہیں کر دیا گیا؟
 تعجب ہے پوری روئے زمین  پر کہ کہیں بھی قرآن اور حدیث سے ماخوذ دستور پر مکمل عمل نہیں ہو رہا ہے  اور ہمارے  تمام حکمران غیروں کے دست نگر ہیں، شراب اور میوزک عام ہونے کی وجہ سے  آئے دن زلزلے پر زلزلے آتے رہتے ہیں… آخری چند سالوں میں وقفے وقفے سے دنیا کے مختلف خطوں میں بھیانک زلزلے آتے رہے ہیں اور ہلاکت خیز  تباہی مچاتے رہے ہیں، یہ سب کیا ہے؟  احادیث کی وعیدوں کی جیتی جاگتی صداقت کی مثالیں ہیں۔
 مگر افسوس کہ ہماریا معاشرہ پھر بھی اس بات کو سنجیدگی سے لینے کے لئے تیار نہیں، بلکہ وہ عذاب الٰہی کو عذاب ہی نہیں تصور کرتا اورالٹا اس کے سائنسی اسباب تلاش کر کے ، ان اسباب کے ذریعہ عذاب الٰہی کو روکنے کی کوشش کرتا ہے… یہ کتنی  بڑی حماقت ہے ، کیا عذاب الٰہی کو بھی کوئی روک سکتا ہے؟ زلزلے کے اسباب کو معلوم کرنے  کے بعد بھی وہ کسی زلزلے کو پچاس سال میں روک سکے، نہ روک سکیں گے، آج ضرورت اس بات کی ہے کہ روحانی اسباب کو تلاش کر کے ان پر توجہ دی جائے اور وہ اسباب ہیں اللہ کی نافرمانیاں اور گناہ…  اللہ ہمیں حق بات سمجھنے کی توفیق دے اور دنیا و برزخ اور آخرت میں اپنی ہر طرح کی گرفت اور عذاب سے محفوظ رکھے۔  آمین
کیا آج ہم نہیں دیکھ رہے ہیں کہ کوئی خطہ ارض امن سے معمور نہیں، قتل غارت گری، چوری ڈکیتی ایک عام سی بات ہوگئی، روزانہ ہزاروں لوگ بے قصور مارے جارہے ہیں… بظاہر یہ قصور ہے ،  لیکن حقیقت میں یہ اللہ کی نافرمانی کی اجتماعی سزا ہے ،  جسے ہم سمجھ نہیں پا رہے ہیں۔

تازہ ترین خبریں

ہنگو:مکان کی چھت گرنے سے 2افراد جاں بحق ،3زخمی

ہنگو:مکان کی چھت گرنے سے 2افراد جاں بحق ،3زخمی

سپریم کورٹ نے سینٹ الیکشن خفیہ کرانے کی رائے دی،شبلی فرازنوکری کر نے پر مجبور ہیں،مریم اورنگزیب

سپریم کورٹ نے سینٹ الیکشن خفیہ کرانے کی رائے دی،شبلی فرازنوکری کر نے پر مجبور ہیں،مریم اورنگزیب

سپریم کورٹ نےسینیٹ الیکشن میں شفافیت کیلئے زبردست فیصلہ دیا ،فیصل جاوید

سپریم کورٹ نےسینیٹ الیکشن میں شفافیت کیلئے زبردست فیصلہ دیا ،فیصل جاوید

سپریم کورٹ نے ہارس ٹریڈنگ کی حوصلہ شکنی کا موقف تسلیم کرلیا ،فواد چوہدری

سپریم کورٹ نے ہارس ٹریڈنگ کی حوصلہ شکنی کا موقف تسلیم کرلیا ،فواد چوہدری

سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد سینیٹ الیکشن دلچسپ ہونگے،شیخ رشید

سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد سینیٹ الیکشن دلچسپ ہونگے،شیخ رشید

سپریم کوٹ کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں،شبلی فراز

سپریم کوٹ کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں،شبلی فراز

وزیراعظم وزراء کی کارکردگی سے ناخوش : وفاقی کابینہ میں ردوبدل کا امکان

وزیراعظم وزراء کی کارکردگی سے ناخوش : وفاقی کابینہ میں ردوبدل کا امکان

نامور اداکار اعجاز درانی انتقال کر گئے

نامور اداکار اعجاز درانی انتقال کر گئے

پاکستان : کورونا سے مزید36افراد جاں بحق

پاکستان : کورونا سے مزید36افراد جاں بحق

کچھ بیرونی قوتیں پاکستان کو غیر مستحکم کرنے اور انتشار پھیلانے کی کوششیں کررہی ہیں، شاہ محمود قریشی

کچھ بیرونی قوتیں پاکستان کو غیر مستحکم کرنے اور انتشار پھیلانے کی کوششیں کررہی ہیں، شاہ محمود قریشی

پی ڈی ایم کا لانگ مارچ سے قبل نئی حکمت عملی ۔۔۔۔۔ تحریک عدم اعتماد لانے پر اتفاق ہوگیا

پی ڈی ایم کا لانگ مارچ سے قبل نئی حکمت عملی ۔۔۔۔۔ تحریک عدم اعتماد لانے پر اتفاق ہوگیا

پاک سرزمین پارٹی خیبر سے کراچی تک ظلم کا نظام ختم کرے گی ۔ مصطفی کمال

پاک سرزمین پارٹی خیبر سے کراچی تک ظلم کا نظام ختم کرے گی ۔ مصطفی کمال

 پی ڈی ایم سینیٹ الیکشن میں اختلافات کا شکار ہوگی لیکن چاروں صوبوں اور مرکز میں پی ڈی ایم کا ‏اتحاد قوم کیلئے خوشخبری ہے۔مولانا فضل الرحمان

پی ڈی ایم سینیٹ الیکشن میں اختلافات کا شکار ہوگی لیکن چاروں صوبوں اور مرکز میں پی ڈی ایم کا ‏اتحاد قوم کیلئے خوشخبری ہے۔مولانا فضل الرحمان

سینیٹ اجلاس سے قبل سندھ میں پی ٹی آئی اتحادیوں کی بیٹھک ۔۔۔۔ ایم کیو ایم نے ظہرانے میں شرکت سے آخری لمحات میں معذرت کر لی

سینیٹ اجلاس سے قبل سندھ میں پی ٹی آئی اتحادیوں کی بیٹھک ۔۔۔۔ ایم کیو ایم نے ظہرانے میں شرکت سے آخری لمحات میں معذرت کر لی