01:27 pm
ہم مزیدچارسال تک ڈونلڈ ٹرمپ کے غیراخلاقی کام  برداشت نہیں کرسکتے،امریکی صدر کی راہ میں بڑی رکاوٹ آگئی؟

ہم مزیدچارسال تک ڈونلڈ ٹرمپ کے غیراخلاقی کام برداشت نہیں کرسکتے،امریکی صدر کی راہ میں بڑی رکاوٹ آگئی؟

01:27 pm

واشنگٹن (ویب ڈیسک )مائیکل بلوم برگ نے تصدیق کی ہے کہ وہ صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹس کی جانب سے حصہ لیں گے۔غیرملکی خبررساں ادارے ’اے ایف پی ‘کی رپورٹ کے مطابق آخری لمحات میں صدارتی انتخابات میں حصہ لینے کااعلان کرتے ہوئے 77سالہ مائیکل بلومبرگ کاکہناتھاکہ میں صدارتی انتخابات میں حصہ لے رہاہوں تاکہ ڈونلڈ ٹرمپ کوشکست دے کرامریکاکی دوبارہ تعمیرکرسکوں ،
واضح رہے کہ مائیکل بلومبرگ کی 3کروڑ ڈالرکی اشتہاری مہم امریکی چینلز پرجاری ہے ،اس سے قبل کئی ہفتوں سے قیاس آرائیاں جاری تھیں کہ نیویارک کے سابق میئروائٹ ہائوس کے لیے امیدواربننے کی تیاری کررہے ہیں ۔انہوں نے حالیہ ہفتوں میں ابتدائی طور پر ووٹنگ کے عمل میں حصہ بننے والی ریاستوں میں امیدوار کے طور پر فیڈرل الیکشن کمیشن میں اپنے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔ارب پتی تاجر کا کہنا تھا کہ 'ہم مزید 4 سال ڈونلڈ ٹرمپ کے غیر اخلاقی اقدامات برداشت نہیں کرسکتے ہیں۔خیال رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی جگہ لینے کے لیے ڈیموکریٹس کی جانب سے 17 امیدوار سامنے آچکے ہیں تاہم 50 ارب ڈالر کے مالک مائیکل بلوم برگ کے اس مقابلے کا حصہ بننے سے تمام امیدوار کو ایک جھٹکا ضرور لگا ہوگا۔سروے کے مطابق امریکا کے سابق نائب صدر جو بائیڈن اس مقابلے میں سب سے آگے ہیں جبکہ ان کے پیچھے دائیں بازو کی الیزبتھ وارن اور برنی سینڈرز ہیں۔تجزیہ کاروں کا ماننا ہے کہ مائیکل بلوم برگ، جو بائیڈن کو ملنے والی حمایت کا کچھ حصہ اپنی جانب کھینچ لیں گے جبکہ چند کا ماننا ہے کہ مائیکل بلوم برگ کا عالمی سطح پر درجہ حرارت میں اضافے کے خلاف لڑنے کا نظریہ انہیں ڈونلڈ ٹرمپ کا اہم حریف بناتا ہے۔الیزبتھ وارن اور برنی سینڈرز کی حمایت کرنے والے دیگر افراد ان ارب پتی افراد پر بھاری ٹیکس لگا کر معاشرے سے عدم مساوات کو کم کرنے کا عزم رکھتے ہیں۔مائیکل بلوم برگ نے اپنے بیان میں کہا کہ امیدوار کی حیثیت سے میں ٹرمپ کے دھوکے کے خلاف کھڑا ہوں گا۔ان کا کہنا تھا کہ وہ اسلحہ سے تشدد اور ماحولیاتی تبدیلی کے حوالے سے امور پر ٹرمپ کے سب سے بڑا حریف ثابت ہوں گے۔

تازہ ترین خبریں