05:05 pm
ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس میں برطانوی پولیس کی تفتیشی ٹیم نے شواہد جمع کرادیئے

ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس میں برطانوی پولیس کی تفتیشی ٹیم نے شواہد جمع کرادیئے

05:05 pm

اسلام آباد(آن لائن)انسداددہشتگردی کی خصوصی عدالت کے جج شاہ رخ ارجمند کی عدالت نے ڈاکٹرعمران فاروق قتل کیس میں برطانوی پولیس کی تفتیشی ٹیم نے شواہد جمع کرادیے عدالت نے آئندہ سماعت پرویڈیولنک کے ذریعے بیان قلمبند کرنے کیلئے گواہوں کی فہرست طلب کرلی۔گذشتہ روز سماعت کے دوران لندن پولیس کے چیف انوسٹی گیشن افسرسٹیورڈگرین وے کی سربراہی میں3رکنی ٹیم کو سخت سیکیورٹی میں عدالت لایاگیا
اس موقع پرجوڈیشل کمپکیکس میں سخت سیکیورٹی اقدامات کیے گئے جبکہ کیس کے تینوں ملزمان خالد شمیم،معظم اور محسن کو بھی سخت سیکیورٹی مہں عدالت لایاگیا، عدالت پیشی کیدوران سربراہ غیرملکی تفتیشی ٹیم نے آلہ قتل، واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹیج، ایک اینٹ،دو تیز دھارچاکو،وقعہ کا نقشہ، تصاویر، فنگرپرنٹس کا ریکارڈ، واقعہ کی ویڈیو، گواہوں کے بیانات کا ریکارڈ اوردیگر شواہد عدالت پیش کرتیہوئے بتایاکہ عمران فاروق کیس کی تفتیش کا نام آہریشن ہیسٹار رکھاگیاتھا،?ملزم محسن علی کیبرطانیہ پہنچنے سے متعلق دستاویزات کء� علاوہ ای میلزاور اس کا تعلیمی ریکارڈ اوردوران تعلیم حاضریوں کا ریکارڈ بھی عدالت پیش کیاگیااور بارکلے بنک کیاکاؤنٹس کی تفصیلات بھی دی گئیں،شواہد کیاصل ریکارڈ کا عدالت نے جائزہ لیااور اس کی نقول کو ریکارڈ کا حصہ بناتیہوئیاس کی کاہیاں صفائی کے وکلاء� کو بھی دی گئیں،جبکہ اصل ریکارڈ برطانوی ٹیم واپس لیجائے گی،غیرملکی گواہ کی طرف سے ریکارڈ پیش کرنے اور بیان مکمل کرنے پر شریک ملزم محسن علی کء� وکیل مہرمحمد بخش نے گواہ پرجرح بھی کرلی جس کے بعد عدالت نے ایف آئی اے سے استفسار کیاکہ کس کس گواہ کا بیان ویڈیو لنک کے زریعے کراناہے اس کی مکمل فہرست عدالت پیش کی جائے اور سماعت5دسمبر تک کیلئے ملتوی کردی۔یادرہے کہ کیس میں تقریبا40استغاثہ کیگواہ ہیں جن میں سے ضروری گواہوں کی فہرست عدالت پیش کی جائے گی جس کیمطابق ویڈیولنک کے زریعے ان کے بیانات قلمبندکییجائیں گے۔

تازہ ترین خبریں